میاں رضا ربانی بلا مقابلہ چیئرمین سینیٹ منتخب،حلف اٹھانے کے بعد قائم مقام صدر ..
تازہ ترین : 1
میاں رضا ربانی بلا مقابلہ چیئرمین سینیٹ منتخب،حلف اٹھانے کے بعد قائم ..

میاں رضا ربانی بلا مقابلہ چیئرمین سینیٹ منتخب،حلف اٹھانے کے بعد قائم مقام صدر بن گئے ،مولانا عبدالغفور حیدری سینیٹ کے ڈپٹی چےئرمین منتخب

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔13 مارچ۔2015ء)پیپلز پارٹی کے میاں رضا ربانی بلا مقابلہ چیئرمین سینیٹ منتخب ہوگئے، کسی امید وار نے چیئرمین سینیٹ رضا ربانی کے مقابلے میں کاغذات نامزدگی جمع نہیں کرائے،میاں رضا ربانی چیئرمین سینیٹ کا حلف اٹھانے کے ساتھ ہی صدر ملک کے قائم مقام صدر بن گئے ۔جمعرات کے روز اپوزیشن اور حکومت کے متفقہ امیدوار پیپلز پارٹی کے میاں رضا ربانی بلا مقابلہ چیئرمین سینیٹ منتخب ہوگئے ،رضا ربانی کے مقابلے کسی پارٹی کے امید وار نے بطور چیئرمین سینیٹ الیکشن لڑنے کیلئے مقررہ مدت تک کاغذات جمع نہیں کرائے ۔

واضح رہے کہ صدر مملکت ممنون حسین اس وقت آذربائیجان کے سرکاری دورے پر ہیں ، اس طرح چیئرمین سینیٹ رضا ربانی قائم مقام صدر بن گئے،ڈپٹی چیئرمین کے لیے مولانا عبدالغفور حیدری اور پی ٹی آئی کے شبلی فراز اور جہانزیب جمال دینی کے کاغذات منظور کر لئے گئے ہیں۔جے یو آئی کے مولانافضل الرحمان نے کہا ہے کہ حکومت اور اپوزیشن نے ان کے امیدوارمولانا عبدالغفور حیدری کے نام پر اتفاق کرلیا ہے۔

اس سے قبل صبح سینیٹ کے نو منتخب ارکان کی حلف برداری ہوئی جس میں اسحق ڈار نے نومنتخب ارکان سے حلف لیا۔حلف اٹھانے والے اراکین نے رول آف ممبرز پر دستخط کئے ادھرسینیٹ اجلاس کے دوران ڈپٹی چےئرمین کے انتخاب کیلئے جمعیت علمائے اسلام(ف) کے مولانا عبدالغفور حیدری اور تحریک انصاف کے شبلی فراز کے درمیان مقابلے میں مولانا عبدالغفور حیدری نے 74ووٹ لیکر کامیابی حاصل کی جبکہ ان کے مدمقابل شبلی فراز نے16ووٹ حاصل کئے جبکہ 6ووٹ مسترد ہوئے،کل ملا کر96ووٹ پول کئے گئے۔

تفصیلات کے مطابق جمعرات کو ڈپٹی چےئرمین کے عہدے کیلئے سینیٹ میں انتخابات ہوئے۔وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے پریزائیڈنگ افسر کے طور پر الیکشن کروایا۔جمعیت علماء اسلام(ف) کے مولانا عبدالغفور حیدری 74ووٹ لیکر کامیاب ہوئے جبکہ ان کے مد مقابل تحریک انصاف شبلی فراز کو16ووٹ پڑے،کل96ووٹ کاسٹ کئے گئے جن میں 6ووٹ مسترد قرار پائے۔مولانا عبدالغفور حیدری کو مسلم لیگ(ن)،پاکستان پیپلزپارٹی،عوامی نیشنل پارٹی ،ایم کیو ایم اور بی این پی کی حمایت حاصل تھی۔

الیکشن کے بعد تمام سینیٹرز حضرات نے مولانا عبدالغفورحیدری کو مبارکباد پیش کی ۔وزیر اعظم میاں نواز شریف نے میاں رضا ربانی کو بلا مقابلہ چیئرمین سینیٹ منتخب ہونے پر مبارکباد پیش کی ہے، اپنے ایک بیان میں وزیر اعظم نے کہا ہے کہ رضا ربانی کے بلا مقابلہ چیئرمین سینیٹ منتخب ہونے سے جمہوریت مزید مضبوط ہوگی ، مسلم لیگ (ن) مفاہمت اور مذاکرات کی سیاست پر یقین رکھتی ہے،انہوں نے کہا کہ میا ں رضا ربانی کی جمہوریت کے لئے لازوال قربانیاں ہیں اور ان کا سینیٹ چیئرمین کا انتخاب سے جمہوریت مزید مضبوط ہوگی

وقت اشاعت : 13/03/2015 - 08:34:34

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں