دہشت گردی کے خاتمے کیلئے ہمارے پاس صرف آگے بڑھنے کا ہی راستہ ہے، جنرل راحیل شریف،آرمی ..
تازہ ترین : 1
دہشت گردی کے خاتمے کیلئے ہمارے پاس صرف آگے بڑھنے کا ہی راستہ ہے، جنرل ..

دہشت گردی کے خاتمے کیلئے ہمارے پاس صرف آگے بڑھنے کا ہی راستہ ہے، جنرل راحیل شریف،آرمی چیف کا کور ہیڈ کوارٹر پشاور کا دورہ، آپریشن ضرب عضب ،خیبر پختونخوا اور فاٹا کی سکیورٹی صورت حال پر تفصیلی بریفنگ،آرمی چیف کی انٹیلی جنس بنیاد پر کارروائیوں میں ملنے والی کامیابیوں کی تعریف کی ،آئی ڈی پیز کی رواں ماہ کے وسط میں اپنے گھروں کو باوقار طریقے سے واپسی ممکن بنائی جائے ،آرمی چیف کی حکام کو ہدایت

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔8 مارچ۔2015ء)چیف آف آرمی سٹاف جنرل راحیل شریف نے کہا ہے کہ دہشت گردوں کے خلاف کارروائی میں صرف ایک ہی راستہ آگے بڑھنے اور ان کا مکمل خاتمے کا ہے ،تمام سکیورٹی اداروں کے درمیان رابطے کو مزید مضبوط بنایا جائے اور بے گھر افراد کو مقررہ اوقات میں واپسی ہونی چاہیے ،پاک فوج کے محکمہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل عاصم سلیم باجوہ کے مطابق آرمی چیف نے کورہیڈ کوارٹر پشاور کا دورہ کیا ہے جہاں آرمی چیف کو آپریشن ضرب عضب ،خیبر پختونخوا،فاٹا ،شمالی وزیرستان اور خیبر ایجنسی میں سکیورٹی صورت حال پر تفصیلی بریفنگ دی گئی جبکہ انٹیلی جنس بنیاد پر کارروائیوں میں ملنے والی کامیابیوں پر بھی آگاہ کیا ۔

آرمی چیف نے کہا کہ ہمارے پاس صرف آگے بڑھنے کا ہی راستہ ہے اور ہم دہشت گردوں کے مکمل خاتمے تک چین سے نہیں بیٹھیں گے،آرمی چیف نے انٹیلی جنس بنیاد پر ہونے والی کارروائیوں کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ آپریشن کے نتیجے میں سرحد پر مینجمنٹ میں بہتری آئی ہے۔انہوں نے کہا کہ دہشت گردوں کے مکمل خاتمے تک آپریشن ضرب عضب جاری رہے گا،ڈی جی آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف نے کہا کہ آئی ڈی پیز کی واپسی رواں ماہ کے وسط سے شروع ہو جائے گی اور متاثرین کوطے شدہ اوقات اور باوقار انداز میں واپس بھیجا جائے گا اور اس حوالے سے متعلقہ اداروں کے درمیان مضبوط رابطے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔

وقت اشاعت : 08/03/2015 - 10:15:24

اپنی رائے کا اظہار کریں