کراچی، کالعدم جماعتوں کے دہشت گرد شہر میں دندناتے پھر رہے ہیں، حیدرعباس رضوی،حکمرانوں ..
تازہ ترین : 1

کراچی، کالعدم جماعتوں کے دہشت گرد شہر میں دندناتے پھر رہے ہیں، حیدرعباس رضوی،حکمرانوں نے آنکھیں بند کررکھی ہیں،ہمارے کارکنوں ،ہمدردوں کو چن چن کرقتل کیا جارہا ہے،رکن رابطہ کمیٹی ،ایم کیو ایم کے بے گناہ کارکنان کے گھروں پر روزانہ کی بنیادوں پر چھاپے مارے جارہے ہیں،پریس کانفرنس سے خطاب،قانون نافذ کرنے والے ادارے جرائم پیشہ افراد کی گرفتاری کے لیے بلاتفریق کارروائی کرتے ہیں ،پاکستان رینجر زسندھ

کراچی ( اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔3 مارچ۔2015ء )متحدہ قومی موومنٹ(ایم کیوایم )کی رابطہ کمیٹی کے رکن حیدر عباس رضوی نے کہاہے کہ کالعدم مذہبی جماعتوں کے دہشت گرد کراچی میں دندناتے پھر رہے ہیں۔ حکمرانوں نے اپنی آنکھیں بند کررکھی ہیں۔ہمارے کارکنوں اور ہمدردوں کو چن چن کرقتل کیا جارہا ہے ۔شہر میں قتل و غارتگری کے لئے دہشتگردوں کو لائسنس دے دیا گیا ہے۔

ایم کیو ایم کے بے گناہ کارکنان کے گھروں پر روزانہ کی بنیادوں پر چھاپے مارے جارہے ہیں۔وہ پیرکو ایم کیوایم کے مرکزنائن زیروخورشید بیگم سیکرٹریٹ میں پریس کانفرنس کررہے تھے ۔حیدر عباس رضوی نے کہا کہ اورنگی ٹاؤن میں کالعدم تنظیم کے دہشت گرد دندناتے پھر رہے ہیں جو ان کا گڑھ بن چکا ہے لیکن حکومت کی جانب سے مسلسل لاپرواہی کا مظاہرہ کیا جارہا ہے جب کہ فرقہ واریت کی بنیاد پر کارکنوں کو روزانہ کی بنیاد پر ٹارگٹ کرنا معمول بن چکا ہے اور گزشتہ روزبھی ملیر کے علاقے شادمان ٹاؤن میں ہمارے کارکن عمران عباس کو ٹارگٹ کر کے قتل کیا گیا لیکن ملزمان اب تک گرفتار نہیں کئے گئے۔

انہوں نے کہا کہ قانون نافذ کرنے والے اداروں کی رٹ کو چیلنج کیا جارہا ہے۔ایسا لگتا ہے کہ کالعدم تنظیم کے دہشت گردوں کو قتل کا لائسنس دے دیا گیا ہے۔حیدر عباس رضوی نے کہا کہ وزیر اعظم سے بھی تحفظات کا اظہار کیا لیکن کالعدم تنظیموں کے خلاف کارروائی نہیں ہوئی۔انہوں نے کہاکہ کراچی کی صورتحال پر ملک کے دیگر سیاسی و مذہبی جماعتیں خاموش ہیں۔

حیدرعباس رضوی نے کہاکہ ہمارے ہزاروں کارکنوں اور 4 منتخب نمائندوں کو کالعدم تنظیموں نے قتل کیا لیکن حکمرانوں کو یہ سب دکھائی نہیں دیتا اور چھاپے مارنے کے لئے صرف ایم کیو ایم کے ذمہ دار اور کارکنوں کے گھر ہی باقی رہ گئے ہیں۔دوسری جانب پاکستان رینجرز سندھ نے کہا ہے کہ قانون نافذ کرنے والے ادارے صرف اور صرف جرائم پیشہ افراد کی گرفتاری کے لیے بلاتفریق کارروائی کرتے ہیں ۔

ایک سیاسی تنظیم کی جانب سے متواتر لگائے جانے والے الزامات حقائق کے منافی ہیں ،جن کا مقصد ملک کی سلامتی کے لیے جاری آپریشن کو نقصان پہنچانا ہے ۔جرائم پیشہ افراد اور دہشت گرد عناصر خواہ وہ کوئی بھی لبادہ اوڑھ لیں رینجرز کے آپریشنز کا ہدف ہیں ۔پاکستان رینجرز سندھ اپنے آپریشنز بلاتفریق رنگ و نسل ،لسانیت اور فرقہ واریت کے خلاف بلاتعطل جاری رکھے ہوئے ہے ۔

گذشتہ چند روز میں گرفتار کیے گئے افراد گھناو?نے جرائم میں ملوث ہیں جن میں ٹارگٹ کلنگ نمایاں ہے ۔قاتل اور بھتہ خوروں کے لیے ہمدردانہ سوچ رکھنے والے گروہ یہ بات ذہن نشین کرلیں کہ رینجرز ہر مجرم کو کیفرکردار تک پہنچانے کے لیے اپنا کردار ادا کرتی رہے گی ۔انہوں نے عوام الناس سے درخواست کی کہ فرقہ وارانہ دہشت گردی کے بارے میں معلومات رینجرز ہیلپ لائن 1101پر دیں ۔معلومات فراہم کرنے والے افراد کا نام صیغہ راز میں رکھا جائے گا ۔

وقت اشاعت : 03/03/2015 - 09:12:08

اپنی رائے کا اظہار کریں