وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث این جی اووز کے خلاف ..
تازہ ترین : 1

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث این جی اووز کے خلاف کریک ڈاؤن شروع، 13سے زائد غیر ملکی این جی اووز کے بارے میں حساس اداروں کی رپورٹ کے بعد پہلے مرحلے میں پابندی عائد کی جائے گی ، غیر ملکی این جی اووز کے خلاف غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کی مصدقہ اطلاعات اور ثبوت وزارت داخلہ کو فراہم

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔19جنوری۔2015ء ) وفاقی وزارت داخلہ کے احکامات وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث این جی اووز کے خلاف کریک ڈاؤن شروع کردیا گیا ہے ،اسلام آباد میں 13سے زائد غیر ملکی این جی اووز کے بارے میں حساس اداروں کی رپورٹ کے بعد پہلے مرحلے میں پابندی عائد کی جائے گی ،حسا س اداروں کی جانب سے ان غیر ملکی این جی اووز کے خلاف غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کی مصدقہ اطلاعات اور ثبوت وزارت داخلہ کو فراہم کردئیے گئے ہیں جس کے بعد اس بات کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔

غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث این جی اووز کے خلاف کریک ڈاؤن جاری ہے تاہم نام کے حوالے سے اطلاعات نہیں ترجمان وزارت داخلہ خبرر ساں ادارے کو ذرائع سے حاصل ہونے والے معلومات کے مطابق اسلام آباد میں کام کرنے والی ان غیر ملکی این جی اووز میں سیودی چلڈرن انٹرنیشنل ،پارٹنر ایڈ انٹرنیشنل (پی اے آئی) سیودی چلڈرن یو ایس اے ،کیتھولک ایلیف سروسز (سی آرایس ) آکسفیم گلگت بلتستان (این آر سی ) کریٹو ایسو سی ایٹس (کال) ڈینشپا گزین کونسل (ڈی آرسی ) انٹرنیشنل فاؤنڈیشن آف الیکٹورل سسٹم ،انٹرنیشنل ری پبلک انسٹی ٹیوٹ ( آئی آرآئی) نیشنل ڈیموکریٹک انسٹی ٹیوٹ (این ڈی آئی ) شامل ہیں جس کے بعد میں مصدقہ اطلاعات ہیں کہ یہ غیر ملکی این جی اووز غیر قانونی اور ملک دشمن سرگرمیوں میں ملوث ہیں ان کے خلاف فوری کارروائی عمل میں لائی جائے ۔

خبر رساں ادارے کو ذرائع نے بتایا کہ وفاقی وزارت داخلہ کے احکامات کے بعد وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث این جی اووز کے خلاف کریک ڈاؤن شروع کردیا گیا ہے ۔اسلام آباد میں 13سے زائد غیر ملکی این جی اووز کے بارے میں حساس اداروں کی رپورٹ کے بعد پہلے مرحلے میں پابندی عائد کی جائے گی ۔حسا س اداروں کی جانب سے ان غیر ملکی این جی اووز کے خلاف غیر قانونی سرگرمیوں میں ملوث ہونے کی مصدقہ اطلاعات اور ثبوت وزارت داخلہ کو فراہم کردئیے گئے ہیں جس کے بعد اس بات کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔وفاقی وزارت داخلہ کے ترجمان نے خبر رساں ادارے کو بتایا کہ غیر ملکی این جی اووز کے خلاف کریک ڈاؤن جاری ہے تاہم نام کے حوالے سے اطلاعات نہیں ہیں۔

وقت اشاعت : 19/01/2015 - 06:15:09

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں