امریکہ کا پاک، بھارت سرحدی جھڑپوں پر اظہارتشویش ، امریکا دونوں ممالک کے درمیان ..
تازہ ترین : 1

امریکہ کا پاک، بھارت سرحدی جھڑپوں پر اظہارتشویش ، امریکا دونوں ممالک کے درمیان مذاکرات کی حوصلہ افزائی کرتا ہے سرحدی جھڑپیں تشویش کا باعث ہیں، مسائل کو مذا کرا ت کے ذریعے حل کیا جا ئے ، ترجمان امریکی محکمہ خارجہ

واشنگٹن (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔7 جنوری۔2015ء)امریکا نے پاکستان اور بھارت کے درمیان تازہ سرحدی جھڑپوں پر اپنی تشویش کا اظہار کیا ہے۔ ہفتہ وار پریس بریفنگ میں امریکی محکمہ خارجہ کی ترجمان جین ساکی کا کہنا تھا کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان بڑھتی ہوئی سرحدی جھڑپیں تشویش کا باعث ہیں اور امریکا دونوں ممالک کے درمیان مذاکرات کی حوصلہ افزائی کرتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ امریکا مذاکراتی عمل کی حمایت کرتا ہے، ماضی میں اس حوالے سے کافی اقدامات اٹھائے گئے تاہم اب بھی بہت کچھ کرنے کی ضرورت ہے۔ترجمان نے فائرنگ کے تبادلے میں ہلاک و زخمی ہونے والوں کے ساتھ تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مسائل کے حل کیلئے مذاکرات کے علاوہ کوئی راہ نہیں ہے۔ جین ساکی نے کہا کہ ماضی میں دونوں ملک وفود کا تبادلہ کرتے رہے ہیں۔

جسے جاری رکھنے کی ضرورت ہے۔ ایک سوال کے جواب میں ترجمان کا کہنا تھا کہ امریکا اور پاکستان کے درمیان انسداد دہشت گردی کے لیے تعاون جاری ہے،جان کیری کے دورہ پاکستان کے حوالے سے جین ساکی کا کہنا تھا کہ انہیں اس حوالے سے کچھ معلوم نہیں ہے ،تاہم انہوں نے کہا کہ امریکا پاکستان کے ساتھ انسداد دہشت گردی سمیت مختلف شعبوں میں دو طرفہ تعاون جاری رہے گا۔ کیری لوگر بل کے تحت پاکستان کو دی جانے والی 50 کروڑ 32 لاکھ ڈالر کی امداد کے سوال پر جان ساکی کا کہنا تھا کہ ابھی اس حوالے سے کانگریس کی منظوری باقی ہے ۔

وقت اشاعت : 07/01/2015 - 09:56:39

اپنی رائے کا اظہار کریں