بحیرہ عرب میں پاکستانی ماہی گیروں کی کشتی دھماکے سے تباہ ہو گئی، بھارتی حکام کا ..
تازہ ترین : 1
بحیرہ عرب میں پاکستانی ماہی گیروں کی کشتی دھماکے سے تباہ ہو گئی، بھارتی ..

بحیرہ عرب میں پاکستانی ماہی گیروں کی کشتی دھماکے سے تباہ ہو گئی، بھارتی حکام کا دعوی ،کشتی پر دھماکا خیز مواد کی موجودگی کے شْبے کے بعد اسے روکنے اور تلاشی کے لیے کہا گیا، تاہم کشتی میں سوار افراد کی جانب سے کوسٹ گارڈز کے احکامات کو رد کر دیا گیا، کشتی پر سوار افراد کی لاشیں تک نہیں ملیں،بھارتی وزارت دفاع

نئی دہلی (اُردو پوائنٹ اخبارآن لائن۔3 جنوری۔2015ء) بحیرہ عرب میں ایک پاکستانی ماہی گیر کشتی دھماکے سے تباہ ہو گئی ہے جس کے نتیجے میں میں چار افراد جاں بحق ہوگئے ہیں ۔ میڈیارپورٹ کے مطابق یہ بات بھارتی وزارت دفاع نے بتائی ہے ۔ وزارت کے بیان میں کہا گیا ہے کہ اس کشتی پر دھماکا خیز مواد کی موجودگی کے شْبے کے بعد اسے روکنے اور تلاشی کے لیے کہا گیا، تاہم اس کشتی میں سوار افراد کی جانب سے کوسٹ گارڈز کے احکامات کو رد کر دیا گیا۔

وزارت دفاع کے مطابق ایک گھنٹے تک اس کشتی کا پیچھا کیا گیا، تاہم اس پر موجود افراد نے اس کشتی کو آگ لگا دی اور اس کے بعد ایک زبردست دھماکے سے کشتی تباہ ہو کر سمندر برد ہو گئی۔ بھارتی حکومت کے مطابق اس کشتی پر سوار افراد کی لاشیں تک نہیں ملیں۔ سرکاری ذرائع کے مطابق یہ واقعہ بحیرہ عرب میں مغربی بھارت کے ساحل سے 365 میل دور پیش آیا۔ بھارتی کوسٹ گارڈز کے ترجمان اجے کمار نے ایسی خبروں کی تردید کی جن میں کہا گیا تھا کہ پاکستانی ماہی گیروں کی اس کشتی پر لدا اسلحہ بارود کسی ممکنہ حملے میں استعمال کیا جانا تھا۔

انہوں نے بتایا کہ اس کشتی کا تقریباً ایک گھنٹے تک پیچھا کیا گیا۔ اس دوران انتباہ کے لیے ہوائی فائرنگ بھی کی گئی۔ اس کے باوجود یہ کشتی سمندر میں آگے ہی بڑھتی رہی۔ انہوں نے مزید بتایا کہ تھوڑی ہی دیر بعد یہ کشتی اچانک رک گئی اور اس میں سوار افراد کشتی میں آگ لگا کر عرشے کے نیچے چھپ گئے۔ اس کے بعد ایک بہت بڑا دھماکہ ہوا اور ساتھ ہی یہ کشتی سمندر برد ہو گئی۔

اس بھارتی بیان پر پاکستانی حکومت کی جانب سے فی الحال کوئی تبصرہ سامنے نہیں آیا ہے۔ بھارتی وزارت دفاع نے بتایا کہ خفیہ ذرائع نے اطلاع دی تھی کہ کراچی کے قریب سے چلنے والی یہ کشتی کسی غیر قانونی ڈیل کی منصوبہ بندی کر رہی ہے۔ اس موقع پر جب کشتی کو روکنے کی کوشش کی گئی تو اس نے بھارتی سمندری حدود سے فرار ہونے کی کوشش بھی کی تھی۔2008ء میں ممبئی میں حملے کرنے والے دہشت گرد بھی سمندری راستے سے ہی بھارت میں داخل ہوئے تھے۔ اس دہشت گردی میں کم از کم 166 افراد ہلاک ہوئے تھے۔ اس واقعے کے بعد سے بھارتی کوسٹ گارڈز نے ملکی سمندری حدود کی حفاظت انتہائی سخت کر رکھی ہے۔

وقت اشاعت : 03/01/2015 - 10:14:19

اپنی رائے کا اظہار کریں