ُُُُُُپشاور، تمام سیاسی جماعتیں شفاف انتخابات کے انعقاد میں اپنابھرپور کردار ..
تازہ ترین : 1

ُُُُُُپشاور، تمام سیاسی جماعتیں شفاف انتخابات کے انعقاد میں اپنابھرپور کردار اداکریں ، آفتاب احمد خان شیرپائو

جمہوری حکومت کا اپنی مدت پوری کرنا اورملک میں جمہوری نظام کا تسلسل نہ صرف نیک شگون ہے بلکہ اس سے معاشی اور اقتصادی ترقی کو بھی تقویت ملتی ہے، چیئرمین قومی وطن پارٹی

ُُُُُُپشاور، تمام سیاسی جماعتیں شفاف انتخابات کے انعقاد میں اپنابھرپور ..
ُُُُُُُُپشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 جون2018ء) قومی وطن پارٹی کے مرکزی چیئرمین آفتاب احمد خان شیرپائو نے تمام سیاسی جماعتوں پر زور دیا ہے کہ وہ شفاف انتخابات کے انعقاد میں اپنابھرپور کردار اداکرے۔انھوں نے کہا کہ جمہوری حکومت کا اپنی مدت پوری کرنا اورملک میں جمہوری نظام کا تسلسل نہ صرف نیک شگون ہے بلکہ اس سے معاشی اور اقتصادی ترقی کو بھی تقویت ملتی ہے۔

تحصیل کونسل درگئی میں پی ٹی آئی کے اپوزیشن لیڈر اور ہیرو شاہ کے ناظم عامر سہیل خان اور عوامی نیشنل پارٹی بدرگہ کے عہدیدار امتیاز خان کی اپنے ساتھیوں اور خاندانوں سمیت قومی وطن پارٹی میں شمولیت کے موقع پر وطن کور پشاور میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ شفاف انتخابات سیاسی استحکام انتہائی ضروری ہے کیونکہ سیاسی استحکام معاشی خوشحالی کا ضامن ہے ۔

انھوں نے کہا کہ آنے والے انتخابات میں حکومتی مشینری کے استعمال کے ضیاع کو غیر یقینی بنایا جائے تاکہ صاف و شفاف اور غیر جانبدار انتخابات کیلئے ماحول بنایا جا سکے۔انھوں نے کہا کہ انتخابات کے بعد بہترین نتائج سے عوام کی الیکشن کے عمل پر یقین پختہ ہو گا اور اس سے جمہوری نظام کو فروغ ملے گا۔انھوں نے اس دوران پی ٹی آئی حکومت کی ناقص پالیسیوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ انھوں نے اپنے دور حکومت میں عوام کو مایوسیوں اور پریشانیوں کے سوا کچھ نہیں دیا۔

انھوں نے کہا کہ پچھلے پانچ سالوں کے دوران سوشل میڈیا کے ذریعے جعلی تبدیلی کا ڈھنڈورا پیٹا گیا جبکہ حقیقت میں اس کا نام و نشان نہیں۔انھوں نے کہا کہ عوام پی ٹی آئی کے لیڈر شپ کا اصل چہرہ دیکھ چکی ہیں اور وہ آنے والے انتخابات میں ووٹ کے ذریعے ان کو نکال باہر پھینک دیں گے۔انھوں نے کہا کہ پی ٹی آئی حکومت نے نہ صرف عوام کو مایوسیوں میں دھکیلا بلکہ خود اپنے کارکنوں کو بھی مایوسیوں کے اندھیرے میں دھکیل دیا اور آج ان کے اپنے ہی کارکن ٹکٹوں کے غیر منصفانہ تقسیم پر اپنی جماعت کے خلاف دھرنا دینے پر مجبور ہو گئے ہیں۔

آفتاب شیرپائو نے کہا کہ فاٹا کا خیبر پختونخوا کے ساتھ انضمام ایک تاریخی سنگ میل ہے جس سے دہائیوں سے پسماندہ رہ جانے والے قبائلی عوام کیلئے ترقی اور خوشحالی کے دروازے کھل جائیں گے۔انھوں نے فاٹا انضمام کو خوش آئندقرار دیتے ہوئے کہا کہ فاٹا انضمام کے بعد وہاں پر قانونی اور انتظامی مشینری کو فعال بنانا چاہیے تاکہ قبائلی عوام کی بہتری کو یقینی بنایا جا سکے۔

انھوں نے کہا کہ فاٹا انضمام کے بعد ضروری ہے کہ وہاں کے پسماندہ علاقوں کی جانب بھرپور توجہ دی جائے تاکہ ان علاقوں کو ترقی کی راہ پر گامزن کیا جا سکے۔انھوں نے کہا کہ پختون قوم نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں عظیم قربانیاں دی ہیں لیکن افسوس کی بات ہے کہ ان کو اس کا صلہ نہیںملا جس سے ان کی مایوسیوں میں اضافہ ہوا۔آفتاب شیرپائو نے کہا کہ کالا باغ ڈیم ایک متنازعہ ایشو ہے تاہم اس سے مزید مسائل پیدا ہونگے انہو ں نے کہا کہ تینوں صوبائی اسمبلیوں میں اسکے خلاف بل پاس ہوچکے ہیں تاہم متنازعہ عمل کو توجہ دینے سے بہتر ہے کہ منڈا ور بھاشہ ڈیم جیسے منصوبوں پر کام کیا جائے۔

آفتاب شیرپاو،ْ نے کہا کہ قومی وطن پارٹی پختونوں کی آواز ہے اور وہ ہر پلیٹ فارم پر انکی حقوق کیلئے جدوجہد کرتی رہے گی۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 14/06/2018 - 21:07:23

اس خبر پر آپ کی رائے‎