ٹکٹ نہ ملنے والی خواتین نے تحریک انصاف کے خلاف طبل جنگ بجا دیا
تازہ ترین : 1

ٹکٹ نہ ملنے والی خواتین نے تحریک انصاف کے خلاف طبل جنگ بجا دیا

ٹکٹوں کے معاملے میں نظر انداز ہونے والی خواتین نے عدالت جانے پر غور شروع کر دیا

ٹکٹ نہ ملنے والی خواتین نے تحریک انصاف کے خلاف طبل جنگ بجا دیا
اسلام آباد (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار-13 جون 2018ء) :ٹکٹ نہ ملنے والی خواتین نے تحریک انصاف کے خلاف طبل جنگ بجا دیا۔ ٹکٹوں کے معاملے میں نظر انداز ہونے والی خواتین نے عدالت جانے پر غور شروع کر دیا۔تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف نے ملک کے طول عرض سے اپنے انتخابی امیدواروں کا اعلان کر دیا ہے۔اس موقع پر پاکستان تحریک انصاف نے بہت سے نظریاتی کارکنان کو نظر انداز کر کے ایسے لوگوں کو ترجیح دی گئی جو نئے نئے تحریک انصاف میں شامل ہوئے تھے تاہم اپنے علاقے میں خاصا اثر و رسوخ رکھتے تھے اور پہلے سے ابھی اپنے حلقوں میں الیکشن یا تو جیت چکے تھے یا پھر جیتنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

اس اعلان کے بعد پاکستان تحریک انصاف کو شدید پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے کیونکہ نظریاتی کارکنان نے ٹکٹیں نہ ملنے پر واویلا کھڑا کر دیا ہے ۔جس روز ٹکٹوں کی تقسیم کی گئی تھی اسی روز سے تحریک انصاف کے کارکنان نے بطور احتجاج بنی گالہ کے سامنے ڈیرے جما لئیے تھے ۔یہ شکایت پورے ملک میں تحریک اںصاف کے کارکنان کو تھی ۔اس حوالے سے تازہ ترین خبر یہ ہے کہ ٹکٹ نہ ملنے والی خواتین نے تحریک انصاف کے خلاف طبل جنگ بجا دیا۔

ٹکٹوں کے معاملے میں نظر انداز ہونے والی خواتین نے عدالت جانے پر غور شروع کر دیا۔میڈیا سے بات کرتے ہوئے خواتین کا کہنا تھا کہ ہم نے پانچ سال پارٹی کی دل و جان سے خدمت کی ہے لیکن جب پارٹی کی ٹکٹ کا معاملہ آیا تو ان لوگوں کو ترجیح دی گئی جن کی پارٹی کے لیے کوئی خدمت ہی نہیں ۔انکا کہنا تھا کہ انکو نوازا گیا ہے جن لوگوں نے جلسوں میں عمران خان کا ساتھ چھوڑا۔نظریاتی کارکنان کو یوں نظر انداز کیا جانا انتہائی افسوسناک ہے۔انکا کہنا تھا کہ ہم منزہ حسن اور عالیہ حمزہ کے فیصلے نہیں مانیں گی کیونکہ وہ میرٹ کے خلاف اور بد نیتی پر مبنی ہیں اور ہو سکتا ہے کہ ہم اس فیصلے کے خلاف پر عدالت سے رجوع کریں۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 13/06/2018 - 21:28:59

اس خبر پر آپ کی رائے‎