عام انتخابات کی مانیٹرنگ کیلئے مانیٹرنگ ٹیمیں تشکیل دیدی گئیں
تازہ ترین : 1

عام انتخابات کی مانیٹرنگ کیلئے مانیٹرنگ ٹیمیں تشکیل دیدی گئیں

مانیٹرنگ ٹیمیں کمیشن کے طے شدہ ضابطہ اخلاق اور رولزکی خلاف ورزی کر نے پر کسی بھی سیاسی پارٹی اور امیدوار کے خلاف شکایات کا فیصلہ کریں گی،الیکشن کمیشن

عام انتخابات کی مانیٹرنگ  کیلئے مانیٹرنگ ٹیمیں تشکیل  دیدی گئیں
اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 13 جون2018ء) الیکشن کمیشن آف پاکستان نے عام انتخابات میں سیاسی پارٹیوں اور امیدواروں کی انتخابی مہم کی مانیٹرنگ کیلئے ضلعی سطح پرمانیٹرنگ ٹیمیں تشکیل دے دیں جو کمیشن کے طے شدہ ضابطہ اخلاق اور رولزکی خلاف ورزی کر نے پر کسی بھی سیاسی پارٹی اور امیدوار کے خلاف شکایات کا فیصلہ کریں گی۔۔۔الیکشن کمیشن آف پاکستان کے جاری کردہ نوٹیفیکیشن کے مطابق تشکیل کردہ یہ مانیٹرنگ ٹیمیں صوبائی اسمبلیوں کے حلقوں کے ساتھ ساتھ متعلقہ قومی اسمبلی کے حلقوں کی مانیٹرنگ بھی کریں گی۔

نوٹیفیکیشن کے مطابق مانیٹرنگ ٹیمیں ہر ضلع کے ڈپٹی کمشنر کی سربراہی میں بنائی گئی ہیں جن کی زیرسرپرستی مختلف محکمہ ہائے کے سربراہوں اور افسروں (گریڈ 19 تا 17 ) پر مشتمل ہر صوبائی حلقہ کے لئے مانیٹرنگ ٹیم کام کرے گی۔اس مقصد کیلئے صوبہ پنجاب کے 36 اضلاع کیلئے 297 ٹیمیں‘ صوبہ بلوچستان کے 31 اضلاع کیلئے 51 ‘ صوبہ سندھ کے 29 اضلاع کیلئے 130 اورصوبہ خیبر پختونخواہ کے 27 اضلاع کیلئے 99 ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔

اسی طرح وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں قومی اسمبلی کے تین حلقوں کیلئے ڈپٹی کمشنر اسلام آبادکی سربراہی میں 3 ٹیمیں بنائی گئی ہیں جبکہ ساتوں قبائلی علاقوں کے قومی اسمبلی کے کل 11 حلقوں کیلئے متعلقہ پولیٹیکل ایجنٹ/ڈسٹرکٹ ریٹرنگ آفیسرکی سربراہی میں 11 مانیٹرنگ ٹیمیں اور ایف آر پشاور‘ ایف آر کوہاٹ‘ ایف آر بنوں‘ ایف آر لکی مروت‘ ایف آر ٹانک اور ایف آر ڈیرہ اسماعیل خان پر مشتمل سات ایف آر(فرنٹیئر ریجن) کے واحد حلقے NA-51 میں سیاسی پارٹیوں اور امیدواروں کے انتخابی مہم کی مانیٹرنگ کیلئے کمشنر بنوں کی سربراہی میں الگ مانیٹرنگ ٹیم تشکیل دی گئی ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 13/06/2018 - 15:25:44

اس خبر پر آپ کی رائے‎