نئی دلی کی عدالت کاکشمیری فوٹو جرنلسٹ کامران یوسف کی ضمانت پر رہائی کا حکم
تازہ ترین : 1

نئی دلی کی عدالت کاکشمیری فوٹو جرنلسٹ کامران یوسف کی ضمانت پر رہائی کا حکم

نئی دلی ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 13 مارچ2018ء) نئی دلی کی ایک عدالت نے بھارتی تحقیقاتی ادارے این آئی اے کی طرف سے پیلٹ گن سے متاثرہ کشمیری نوجوانوں کی تصاویر ویب سائیٹ پر جاری کرنے کے جرم میں گرفتار کشمیری فوٹو جرنلسٹ کامران یوسف کی ضمانت منظور کر لی ۔کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق ایڈیشنل سیشنز جج ترن شیراوت نے کامران یوسف کی ضمانت پر رہائی کی منظوری دیتے ہوئے پچاس ہزار روپے کے مچلکے جمع کرانے کی ہدایت کی ۔

این آئی اے نے 5ستمبر کو سرینگرسے کامران یوسف کو گرفتار کیاتھا۔این آئی اے نے کامران یوسف کی ضمانت پر رہائی کی مخالفت کرتے ہوئے کہاکہ بعض گواہان نے تصدیق کی ہے کہ کامران یوسف کوبھارت مخالف نعرے لگاتے اور پتھرائو کرتے ہوئے دیکھا گیا ہے ۔ تاہم کامران یوسف کے وکیل نے ان کی بے گناہی ثابت کر دی ۔ دونوں اطراف کے وکلاء کے دلائل سننے کے بعد جج نے کامران یوسف کی ضمانت پر رہائی کاحکم جاری کیا۔
وقت اشاعت : 13/03/2018 - 11:10:06

اس خبر پر آپ کی رائے‎