غیراخلاقی وڈیوز شیئر کرنے پر عرب خاتون کو ایک سال قید اور 75لاکھ روپے جرمانہ
تازہ ترین : 1

غیراخلاقی وڈیوز شیئر کرنے پر عرب خاتون کو ایک سال قید اور 75لاکھ روپے جرمانہ

غیراخلاقی وڈیوز شیئر کرنے پر عرب خاتون کو ایک سال قید اور 75لاکھ روپے ..
ابو ظہمی(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار - 12جنوری 2018ء ):غیراخلاقی وڈیوز شیئر کرنے پر عرب خاتون کو ایک سال قید اور 75لاکھ روپے جرمانہ کر دیا گیا۔تفصیلات کے مطابق متحدہ عرب امارات کی ریاست ابو ظہبی کی وفاقی عدالت نے عرب خاتون کو سوشل میڈیا پر غیراخلاقی مواد کی تشہیر اور شیئرنگ کا مرتکب قرار دیتے ہوئے اخلاقی اقدار کی پامالی کرنے اور سائبر قوانین کی خلاف ورزی کا مجرم ٹہرایا ہے۔

عدالت نے مختلف سماجی ویب سائٹس پر فحش مواد کرنے کی مجرمہ کو75لاکھ روپے جرمانہ اور ایک سال قید کی سزا سنائی ہے۔ عدالتی دستاویزات کے مطابق ملکی سائبرکرائم مجرمہ کی سوشل میڈیا پر ہونے والی غیر قانونی سرگرمیوں پر کڑی نظر رکھے ہوئے تھی، مجرمہ نے مختلف ویب سائٹس پر کئی اکاونٹس بنارکھے تھے جسے وہ غیر اخلاقی مواد کی شیئرنگ کے لیے استعمال کرتی تھی
وقت اشاعت : 12/01/2018 - 23:14:59

اس خبر پر آپ کی رائے‎

Arab women imprisoned for a year and Rs 75 lakh on sharing nonprofit videos

The Arab woman was imprisoned for a year and was fined 75 billion rupees. According to details, Abu Dhabi's Federal Court of the United Arab Emirates condemned Arab women advertising and sharing non-drug content on social media. The perpetrator has been accused of pampering moral values ​​and violating cyber laws