بھارتی سپریم کورٹ کے4 ججز نے پریس کانفرنس کر کے بھارتی انصاف کے پول کھول دیئے
تازہ ترین : 1

بھارتی سپریم کورٹ کے4 ججز نے پریس کانفرنس کر کے بھارتی انصاف کے پول کھول دیئے

بھارتی سپریم کورٹ کے4 ججز نے پریس کانفرنس کر کے بھارتی انصاف کے پول ..
بھارت(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔12جنوری2018ء):بھارتی سپریم کورٹ کے 4ججز نے اپنے ہی چیف جسٹس کے خلاف پریس کانفرنس کی جس میں انہوں نے کہا کہ بھارت میں مخصوس ججز کو کیس دیئے جا رہے ہیں ،جو کیس کے مطابق پسندیدہ ججز ہوتے ہیں وہ مخصوس کیس ان ججز کو فراہم کر دیئے جاتے ہیں اور ان کیسز میں انصاف کے تقاضوں کو پورا نہیں کیا جاتا ۔تفصیلات کے مطابق بھارتی سپریم کورٹ کے 4 ججزنے اپنے ہی چیف جسٹس کے خلاف بغاوت کا اعلان کر دیا ہے ۔ دوسری جانب بھارتی میڈیا نے اس پریس کانفرنس کو بغاوت قرار دے دیا کہ یہ ججز خود انصاف کہ پہلوؤں کو مد نظر نہیں رکھ رہے اس لئے چیف جسٹس کے خلاف پریس کانفرنس کر رہے ہیں ۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 12/01/2018 - 14:02:44

اس خبر پر آپ کی رائے‎

The four judges of the Indian Supreme Court pressed the Indian Justice Pool by pressing a press conference

: The four judges of the Indian Supreme Court pressed a press conference against his chief justice in which he said that the judges are being given to the judges judges in India, who are the favorite judge according to the case, the cases are provided to the judges. And the justice requirements are not met in these cases. According to the details, four judges of the Indian Supreme Court have announced an uprising against their own chief justice.

Related : India, Supreme Court

متعلقہ عنوان :