فیض آباد دھرنا کیس میں رپورٹ جمع نہ کروائے جانے پر عدا لت بر ہم
تازہ ترین : 1

فیض آباد دھرنا کیس میں رپورٹ جمع نہ کروائے جانے پر عدا لت بر ہم

آئندہ سماعت پر سیکرٹری دفاع اور ڈاریکٹر جنرل انٹیلی جینس بیورو(آئی بی )کو ذاتی حیثیت میں طلب عدالت کو مجبور نہ کیا جائے ورنہ وزیراعظم کو بھی بلا سکتے ہیں، فاضل جج کے ریمارکس

فیض آباد دھرنا کیس میں رپورٹ جمع نہ کروائے جانے پر عدا لت بر ہم
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 جنوری2018ء)عدالت عالیہ اسلام آباد نے فیض آباد دھرنا کیس میں رپورٹ جمع نہ کروائے جانے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے آئندہ سماعت پر سیکرٹری دفاع اور ڈاریکٹر جنرل انٹیلی جینس بیورو(آئی بی )کو ذاتی حیثیت میں طلب کر لیا ہے دوران سماعت فاضل جج نے ریمارکس دیئے کہ عدالت کو مجبور نہ کیا جائے ورنہ وزیراعظم کو بھی بلا سکتے ہیں تفصیلات کے مطابق گزشتہ جمعہ کے روز اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس شوکت عزیز صدیقی پر مشتمل سنگل رکنی بینچ نے فیض آباد دھرنے کے حوالے سے کیس کی سماعت کی فاضل جج نے جب سماعت شروع کی تو ڈپٹی اٹارنی جنرل کی جانب سے استدعا کی گئی کہ سپریم کورٹ میں کیس زیر سماعت ہے لہذا عدالت یہ کیس نہ سنے جس پر معزز جج نے ریمارکس دیئے سپریم کورٹ میں دھرنے کے حوالے سے کیس چل رہا ہے راجہ ظفر الحق رپورٹ سے اس کا کوئی تعلق نہیں ہے متنازعہ آڈیو پر کیا رپورٹ دی گئی اگر آئی بی کا دائر اختیار نہیں ہے تو پھر ایف آئی اے سے تحقیقات کروائیں بعدازاں عدالت عالیہ نے رپورٹ جمع نہ کروائیں جانے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے حکم دیا کہ آئندہ سماعت پر سیکرٹری داخلہ چیف کمشنر اور آئی جی اسلام آباد کے ساتھ ساتھ سیکرٹری دفاع اور ڈاریکٹر جنرل انٹیلی جینس بیورو ذاتی حیثیت میں پیش ہوں اور عدالت کو آگاہ کریں کہ راجہ ظفر الحق رپورٹ کا شق وار جواب دینا تو درکنار فریقین کی جانب سے کوئی رپورٹ تاحال کیوں جمع نہیں کروائی جاسکی فاضل جج نے ریمارکس دیئے کہ عدالت کو مجبور نہ کریں ورنہ وزیراعظم کو بھی بلا سکتے ہیں بعدازاں عدالت نے کیس کی مزید سماعت 9فروری تک کیلئے ملتوی کردی۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 12/01/2018 - 14:42:05
In the case of Faizabad, we are not allowed to submit a report Secretary-General and Director General Intelligence Jurisdiction (IB) seeking personal status on the next hearing Do not force the court or call the prime minister, Remarks of Fazl judge

The court adjourned the hearing on the next hearing, Secretary Defense and Director General Intelligence Jan Bureau of Investigation on the next hearing, while hearing the case, the court directed the court to force the court According to details, according to the details, the benchmarked by Justice Shaukat Aziz Siddiqui of Islamabad High Court on Friday Faiz-ul-Haq hearing hearing regarding the case of Faizabad. The Attorney General has been asked that the case is under the Supreme Court Therefore, the court did not hear the case on which the Honorable Judge gave the remarks to the Supreme Court. The case is not related to Raja Zafar ul Haq's report. What is the report on controversial audio if IB has no authority? Then investigate the FIA, then courtesy of the report on the matter not being submitted by the FIA, saying that the next hearing was accompanied by the Secretary General, Chief Commissioner and IG Islamabad as well as Secretary Defense and Director General Intelligence Jan Bureau Personal Be present in the situation and inform the court that the reply of the reply to the Raja Zafar ul Haq report

Related : Hearing, Prime Minister, Sit In Protest

متعلقہ عنوان :