پسند کی شادی کرنے والی فلپائنی لڑکی نے شہریت لینے اور ڈی پورٹ نہ کرنے کے لیے اسلام ..
تازہ ترین : 1

پسند کی شادی کرنے والی فلپائنی لڑکی نے شہریت لینے اور ڈی پورٹ نہ کرنے کے لیے اسلام آباد ہائیکورٹ سے رجوع کر لیا

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 دسمبر2017ء) پسند کی شادی کرنے والی فلپائنی لڑکی مریم نے شہریت لینے اور ڈی پورٹ نہ کرنے کے لیے اسلام آباد ہائیکورٹ میں رٹ دائر کر دی ہے۔ جمعہ کو جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے کیس کی سماعت کی۔ دوران سماعت درخواست گزار کے وکیل نے بتایا کہ فلپائنی لڑکی مریم 5 اپریل 2016 کو پاکستان ایک سال کے ورک ویزہ کے ساتھ پہنچی تو کرم ایجنسی کے رہائشی عمران سے پشاور میں ملاقات ہوئی، مریم نے 22جون2017 کو اسلام قبول کیا اور منڈی بہائوالدین کی یونین کونسل نمبر14میں نکاح کر لیا۔

مریم نے ورک ویزہ ختم ہونے پر وزارت داخلہ میں ویڈ لاک پالیسی کے تحت شہریت حاصل کرنے کی درخواست دی ہے ۔ مریم بی بی اپنے شوہر کے ہمراہ عدالت میں پیش ہوئی۔دائر درخواست میں وزارت داخلہ ،ڈی جی ایف آئی اے اور نادرا کو فریق بنایا گیا ہے ۔جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے ابتدائی سماعت کے بعد درخواست مزید سماعت کیلئے منظور کرلی۔ مزید سماعت 12جنوری کو ہوگی۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 22/12/2017 - 19:28:42

اس خبر پر آپ کی رائے‎

متعلقہ عنوان :