خاتون نسیم مائی نے سابق وزیراعظم یوسف رضاگیلانی کی اہلیہ ہونے کا دعویٰ کر دیا
تازہ ترین : 1
خاتون نسیم مائی نے سابق وزیراعظم یوسف رضاگیلانی کی اہلیہ ہونے کا دعویٰ ..

خاتون نسیم مائی نے سابق وزیراعظم یوسف رضاگیلانی کی اہلیہ ہونے کا دعویٰ کر دیا

نسیم مائی نے ‏عدالت میں یوسف رضاگیلانی سے50 کروڑ روپے بطور نان ونفقہ کے حصول کیلئے عدالت سے رابطہ بھی کر لیا

ملتان (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔07 دسمبر2017ء) خاتون نسیم مائی نے سابق وزیراعظم یوسف رضاگیلانی کی اہلیہ ہونے کا دعویٰ کر دیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ملتان سے تعلق رکھنے والے پاکستان کے سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی بڑے اسکینڈل کا شکار ہوگئے ہیں۔ نسیم مائی نامی ایک خاتون نے یوسف رضا گیلانی کی اہلیہ ہونے کا دعوی کیا ہے۔ خاتون نسیم مائی نے سابق وزیراعظم یوسف رضاگیلانی کی اہلیہ ہونے کا دعویٰ کرتے ہوئے ‏عدالت میں سابق وزیراعظم سے 50 کروڑ روپے بطور نان ونفقہ کے حصول کیلئے عدالت سے رابطہ بھی کر لیا ہے۔

عدالت میں نسیم مائی کی جانب سے دائر کی گئی درخواست کی سماعت سول جج نذرعباس نےکی۔ سماعت کے دوران جج کو بتایا گیا کہ 20 سال قبل نسیم مائی کا یوسف رضا گیلانی سے نکاح اورشادی ہوئی۔ اس کے بعد نسیم مائی رخصتی کے بعد یوسف رضا گیلانی کے گھر رہی۔ شادی کے ان 20 سالوں کے دوران ان کی کوئی اولاد پیدا نہیں ہوئی۔ اب دونوں میں گزشتہ 5 سال سے علیحدگی چل رہی ہے۔ لہذا عدالت نسیم مائی کو 5 سال کا خرچہ جو کہ 50 کروڑ روپے بنتا ہے یوسف رضا گیلانی سے دلوائے۔ نسیم مائی کی جانب سے دائر کیے گئے دعوے کی کاپی ملاحظہ کیجیے:
خاتون نسیم مائی نے سابق وزیراعظم یوسف رضاگیلانی کی اہلیہ ہونے کا دعویٰ ..

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

اس خبر نوں پنجابی وچ پڑھو
وقت اشاعت : 07/12/2017 - 19:55:42

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں