سندھ ہائی کورٹ نے این ٹی ایس کو نئے ٹیسٹ لینے سے روک دیا
تازہ ترین : 1
سندھ ہائی کورٹ نے این ٹی ایس کو نئے ٹیسٹ لینے سے روک دیا

سندھ ہائی کورٹ نے این ٹی ایس کو نئے ٹیسٹ لینے سے روک دیا

این ٹی ایس کو سیاستدانوں کی جانب سے متازعہ بنایا جارہا ہے،وکیل این ٹی ایس

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 نومبر2017ء)سندھ ہائی کورٹ نے نیشنل ٹیسٹنگ سروس(این ٹی ایس)کو اعلی تعلیمی اداروں اور سرکاری ملازمتوں کے لیے امیدواروں سے ٹیسٹ لینے سے روکنے کا حکم دے دیاہے۔جمعرات کوسندھ ہائی کورٹ میں جسٹس منیب اختر کی سربراہی میں بینچ نے میڈیکل یونیورسٹیز میں داخلے کے لیے این ٹی ایس ٹیسٹ کا پرچہ آئوٹ ہونے کے معاملے پر درخواست کی سماعت کی۔

سماعت کے دوران عدالت نے این ٹی ایس کے نئے ٹیسٹ لینے سے روکنے کا حکم جاری کردیا ہے۔ عدالت نے کہاکہ جب تک کیس کا فیصلہ نہیں ہوجاتا حکومت این ٹی ایس کے ٹیسٹ کے لیے نئی تاریخ کا اعلان نہ کرے۔این ٹی ایس کے خلاف دائردرخواست میں کہا گیا تھاکہ پرچہ شروع ہونے سے قبل آئوٹ ہوچکا تھا لہذا این ٹی ایس کے ادارے کو حتمی نتیجہ جاری کرنے سے روکا جائے۔

دوسری جانب وکیل این ٹی ایس نے کہا کہ کسی بھی طالب علم کی طرف سے این ٹی ایس کا پرچہ آئوٹ ہونے کی شکایت موصول نہیں ہوئی، این ٹی ایس کو سیاستدانوں کی جانب سے متنازعہ بنایا جارہا ہے۔ ایک ایم پی اے نے بہت باتیں کیں جس پر جسٹس منیب نے کہاکہ کسی شخصیت کے بارے میں فضول بات نہ کریں۔ این ٹی ایس اتھارٹی نے معاملے کی تحقیقات کی تھیں تاہم کسی کی غفلت سامنے نہیں آئی ہے۔فریقین نے این ٹی ایس ٹیسٹ کے معاملے پر تحقیقاتی رپورٹ پیش کرنے پرمزید مہلت مانگ لی ہے۔جسٹس منیب اختر نے استفسار کیا کہ وزیراعلی تحقیقاتی کمیٹی کی کیا فائنڈنگ ہیں جس پر سیکرٹری صحت نے بتایا کہ دسمبر کے پہلے ہفتے تک تحقیقات مکمل کرلی جائیں گی۔ کیس کی مزید سماعت 29 نومبر تک ملتوی کردی گئی ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 23/11/2017 - 16:22:33

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں