بھارت سی پیک کیخلاف ہر حد تک سازشیں کر رہا ہے ،ہر سازش کا منہ توڑ جواب دیا جائے ..
تازہ ترین : 1

بھارت سی پیک کیخلاف ہر حد تک سازشیں کر رہا ہے ،ہر سازش کا منہ توڑ جواب دیا جائے گا ‘ رحمن ملک

بلوچستان میں بھی قتل و غارت بھارت کرا رہا ہے ، محفوظ افغانستان محفوظ پاکستان کی ضمانت ، کشمیر میں بھارتی بربریت عالمی برادری کو کیوں نظر نہیں آتی امریکہ اگر حقانی نیٹ ورک ختم نہیں کر سکتا تو ہمیں ڈو مور کیوں کہتا ہے ،اب امریکہ کا ڈو مور کا وقت ہے‘ سابق وزیر داخلہ کی میڈیا سے گفتگو

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 نومبر2017ء) پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنما و سابق وزیر داخلہ رحمن ملک نے کہا ہے کہ بھارت سی پیک کے خلاف ہر حد تک سازشیں کر رہا ہے مگر ہر سازش کا منہ توڑ جواب دیا جائے گا ، بلوچستان میں بھی قتل و غارت بھارت کرا رہا ہے ، محفوظ افغانستان محفوظ پاکستان کی ضمانت ہے ، کشمیر میں بھارتی بربریت عالمی برادری کو کیوں نظر نہیں آرہی ، امریکہ اگر حقانی نیٹ ورک ختم نہیں کر سکتا تو ہمیں ڈو مور کیوں کہتا ہے ،اب امریکہ کا ڈو مور کا وقت ہے۔

لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بھارت کی پاکستان کیخلاف سازشیں کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ہیں،بھارت نے 5ہوائی اڈے دوسرے ملکوں میں بنائے ہوئے ہیں،بھارت مشرقی پاکستان کے حربے استعمال کر رہا ہے۔ جو حکومت سازش نہیں پکڑ سکتی پھر اسے حکومت میں رہنے کا کوئی جواز نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ بھارت سی پیک کے خلاف مہم چلا رہا ہے اور ہر حد تک سازشیں کی جا رہی ہیں ، سی پیک کی حفاظت کے لئے پاکستان ہر وقت تیار ہے اور ہر سازش کا منہ توڑ جواب دیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ بلوچستان میں قتل و غارت بھارت کرا رہا ہے ، محفوظ افغانستان محفوظ پاکستان کی ضمانت ہے ۔ انہوں نے کہا کہ بھارتی بربریت پر انسانی حقوق کی تنظیموں نے آنکھیں بند کر رکھی ہیں، کشمیر میں بھارتی بربریت عالمی برادری کو کیوں نظر نہیں آرہی ، مسئلہ کشمیر حل کیے بغیر خطے میں امن قائم نہیں ہو سکتا۔انہوں نے مزید کہا کہ امریکہ اگر حقانی نیٹ ورک ختم نہیں کر سکتا تو ہمیں ڈو مور کیوں کہتا ہے ،اب امریکہ کا ڈو مور کا وقت ہے ۔ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے رحمان ملک نے مسلم لیگ (ن) کی قیادت کو مشورہ دیا کہ جو دن رہ گئے ہیں انہیں لڑائی سے نہیں بلکہ پیار سے گزار لیا جائے کیونکہ اگر (ن) لیگ نے تصادم کا راستہ نہ چھوڑا تو جمہوریت کا جہاز پاش پاش ہو جائے گا۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 19/11/2017 - 20:20:33

اپنی رائے کا اظہار کریں