پروین رحمن کو اجرتی قاتلوں نی40 لاکھ روپے کے عوض پر قتل کیا، ملزم امجد حسین
تازہ ترین : 1
پروین رحمن کو اجرتی قاتلوں نی40 لاکھ روپے کے عوض پر قتل کیا، ملزم امجد ..

پروین رحمن کو اجرتی قاتلوں نی40 لاکھ روپے کے عوض پر قتل کیا، ملزم امجد حسین

سیاسی جماعت نے کالعدم تنظیم کو پیسے دے کر پروین رحمان کو قتل کروایا تھا،گرفتار ملزم کا دوران تفتیش انکشاف

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 نومبر2017ء) اورنگی ٹاون پائلٹ پروجیکٹ کی ڈائریکٹر پروین رحمان قتل میں ملوث ملزم امجد حسین نے پولیس کی جوائنٹ انٹروگیشن ٹیم کے سامنے بیان میں انکشاف کیاہے کہ پروین رحمن کو اجرتی قاتلوں نی40 لاکھ روپے کے عوض پر قتل کیا۔گرفتار ملزم نے انکشاف کیا ہے کہ سیاسی جماعت نے کالعدم تنظیم کو پیسے دے کر پروین رحمان کو قتل کروایا تھا۔

ڈائریکٹر اورنگی پائلٹ پروجیکٹ پروین رحمان قتل کیس میں گرفتار ملزم امجد حسین عرف امجد آفریدی نے جے آئی ٹی کے سامنے ایسے سنسنی خیز انکشافات کیے، جس سے تفتیش نے نیا رخ اختیار کر لیا۔ملزم کے مطابق اس کیس میں پہلے سے گرفتار ملزم رحیم سواتی اور اے این پی کے علاقائی عہدیدار ایاز سواتی پروین رحمان سے علاقے میں جم کھولنے کے لئے زمین مانگ رہے تھے۔

پروین رحمان کے انکار پر جنوری سال 2013 میں رحیم سواتی کے گھر پروین رحمان کو قتل کرنے کا منصوبہ بنایا گیا، جس میں ملزم امجد حسین، ایاز سواتی، رحیم سواتی اور احمد عرف پپو شامل تھے۔قتل کے لئے رحیم سواتی نے کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے موسی اور محفوظ اللہ عرف بھالو نامی دو علاقائی عہدیداروں سے رابطہ کیا، جو 40 لاکھ روپے میں پروین رحمان کو قتل کرنے میں تیار ہوگئے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 14/11/2017 - 15:00:14

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں