اکتوبر آزاد کشمیر کا 70واں یوم تاسیس تاریخی عہد کے تجدید کا دن ہے،وفاقی وزیر چوہدری ..
تازہ ترین : 1
اکتوبر آزاد کشمیر کا 70واں یوم تاسیس تاریخی عہد کے تجدید کا دن ہے،وفاقی ..

اکتوبر آزاد کشمیر کا 70واں یوم تاسیس تاریخی عہد کے تجدید کا دن ہے،وفاقی وزیر چوہدری محمد برجیس طاہر

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 اکتوبر2017ء) وفاقی وزیر برائے امورکشمیر و گلگت بلتستان چوہدری محمد برجیس طاہر نے آزاد کشمیر کے 70ویں یوم تاسیس کے موقع پر اپنے خصوصی پیغام میں کہا ہے کہ 24 اکتوبر کا دن اس تاریخی عہد کے تجدید کا دن ہے کہ ہم مقبوضہ کشمیر کے عوام کو اپنا حق خودارادیت دلوانے اور نصب العین کے حصول کیلئے اپنی تمام تر جدوجہد جاری رکھیں گے۔

انہوں نے کہا کہ آج کا دن اس امر پر بھی غور کرنے کا دن ہے کہ ریاست جموں و کشمیر کے ایک حصہ کو بھارتی ناجائز تسلط سے آزاد کرانے اور وہاں کے عوام کو حق خودارادیت دلوانے کے کاز کو ہم نے کس قدر آگے بڑھایا ہے اور اس جدوجہد کو اپنے منطقی انجام تک پہنچانے کیلئے ہمیں اور کس قدر کوشش کرنا ہو گی۔ انہوں نے کہا کہ آج کے دن ہم نے یہ عہد بھی کرنا ہے کہ آزاد کشمیر اور پاکستان کے عوام اور حکومت اس وقت تک چین سے نہیں بیٹھیں گے جب تک مقبوضہ کشمیر کے عوام کو ان کا حق خود ارادیت نہیں مل جاتا۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں مسلمان آبادی کے تناسب کو تبدیل کرنے کیلئے درجنوں کالے قوانین اور انسانیت سوز ظلم و تشدد کا سہارا لے رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں ماورائے عدالت قتل کے واقعات میں بے پناہ اضافہ ہو چکا ہے اور مقبوضہ کشمیر میں ہزاروں معصوم کشمیری نوجوانوں کی آنکھوں کو پیلٹ گن سے چھلنی کیا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ کشمیریوں کی عزت النفس کو مجروع کرنا بھارتی حکومت کا وطیرہ بن چکا ہے اور بھارتی فوج اور اس کے ایجنٹس خواتین کی چٹیا کاٹنے جیسے ہتک آمیز واقعات میں بھی ملوث ہیں۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ بھارتی حکومت کویہ جان لینا چاہئے کہ بھارت ان اوچھے ہتھکنڈوں سے نہ تو پچھلے 70 سال میں مقبوضہ کشمیر کے عوام کو اپنے حق خودارادیت جیسے پیدائشی حق سے دستبردار کرا سکا ہے اور نہ ہی آئندہ وہ مقبوضہ کشمیر کے عوام کو اپنے حق کے حصول سے دستبر دار کرا سکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کی عوام کے عزم اور اپنے کازکے حصول سے committment کو دیکھ کر چند سابق بھارتی حکام اور سابق بھارتی فوجی جرنیل بھی اس حقیقت کو تسلیم کرنے پر مجبور ہو چکے ہیں کہ بھارت فوجی طاقت سے مقبوضہ کشمیر کے عوام کو نہیں دبا سکتا اور یہ کہ مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے بھارت کو کشمیریوں اور پاکستان سے مذاکرات کرنا ہوں گے۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ سابق وزیراعظم محمد نواز شریف نے مسئلہ کشمیر کو دنیا کے تمام اہم فورمز پر اٹھایا اور جنرل اسمبلی میں اپنے خطبات میں اس مؤقف کو بھرپور واضح کیا کہ مسئلہ کشمیر کے حل کے بغیر نہ تو بھارت سے تعلقات معمول پر آ سکتے ہیں اور نہ ہی جنوبی ایشیاء میں پائیدار امن قائم ہو سکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے بھی مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ کے فورم پر بھرپور طریقے سے اٹھایا اور دنیا بھر میں ہمارے سفارتخانے اور اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی جانب سے انسانی حقوق کی شدید خلاف ورزی اور کشمیریوں کے حق خود ارادیت کی آواز بھرپور طریقے سے بلند کر رہے ہیں۔ وفاقی وزیر نے کہاکہ آج آزادکشمیر کے یوم تاسیس کے موقع پر ہم نے اس عہد کی تجدید کرنی ہے کہ ہم اپنے مقبوضہ کشمیر کے بھائیوں کے حق خودارادیت کے حصول اور آزادی تک اُن کی تمام تر سیاسی ،سفارتی و اخلاقی حمایت جاری رکھیں گے۔
وقت اشاعت : 23/10/2017 - 16:52:36

اپنی رائے کا اظہار کریں