شیخوپورہ ،ْ چلڈرن ہسپتال کے ڈاکٹروں نے کم سن بچی کا علاج کرنے سے انکار کر دیا
تازہ ترین : 1
شیخوپورہ ،ْ چلڈرن ہسپتال کے ڈاکٹروں نے کم سن بچی کا علاج کرنے سے انکار ..

شیخوپورہ ،ْ چلڈرن ہسپتال کے ڈاکٹروں نے کم سن بچی کا علاج کرنے سے انکار کر دیا

پہلے پولیس کاروائی کریگی تو علاج ہو گا ،ْ ڈاکٹر کا موقف ……مجبور والدین کو بچی کو ایک پرائیویٹ کلینک پر جانا پڑا

شیخوپورہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 21 اکتوبر2017ء) شیخوپورہ میں چلڈرن ہسپتال کے ڈاکٹروں نے کم سن بچی کا علاج کرنے سے انکار کر دیا۔میڈیارپورٹ کے مطابق شیخوپورہ کے چلڈرن ہسپتال میں ڈاکٹروں نیگرم چائے سے جھلسنے والی بچی کا علاج یہ کہہ کر کرنے سے انکار کر دیا کہ پہلے پولیس کاروائی کریگی تو علاج ہو گا۔ 3 سال کی لائبہ ماہ نور تڑپتی رہی لیکن دکھی انسانیت کا غم بانٹنے والوں پر کوئی اثر نہ ہوا۔ بحث و تکرار کے بعد مجبور والدین کو بچی کو ایک پرائیویٹ کلینک پر جانا پڑا۔ میڈیا پر خبر نشر ہونے پر چیف ایگزیکٹیو ہیلتھ نے واقعہ کا نوٹس لے کر تحقیقاتی کمیٹی بنا دی جس نے انکوائری شروع کردی ہے ،ْمتاثرہ بچی کو جناح ہسپتال لاہور منتقل کردیا گیا ۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

اس خبر نوں پنجابی وچ پڑھو
وقت اشاعت : 21/10/2017 - 15:50:16

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں