خیرپور کے نواحی گائوں میں حوا کی بیٹی شوہر کے ظلم کا شکار،بلیڈ سے سر کے سارے بال ..
تازہ ترین : 1

خیرپور کے نواحی گائوں میں حوا کی بیٹی شوہر کے ظلم کا شکار،بلیڈ سے سر کے سارے بال کٹ دیئے، متاثرہ خاتون کا احتجاج

خیرپور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 17 اکتوبر2017ء)خیرپور کے نواحی گائوں میں حوا کی بیٹی شوہر کے ظلم کا شکار،بلیڈ سے سر کے سارے بال کٹ دیئے،خاوند کا بیوی پر مبینہ تشدد،گنجا کردیا،متاثرہ خاتون کا احتجاج ۔تفصیلات کے مطابق خیرپور کے تھانہ شاہ لطیف کی حدود نواحی گائوںکشمیر عیسانی میں تیس سالہ رخسانہ دخترمنیر احمد کٹوہر پر اس کے شوہرعلی رضا عیسانی نے تشدد کا نشانہ بناکر بلیڈ سے اس کے سر کے تمام بال کاٹ کر گنجا کردیا،متاثرہ خاتون رخسانہ نے اپنے خاوند پر الزام لگاتے ہوئے کہاہے اس کے شوہر نے اس پر غیر مردوں کے ساتھ تعلقات کا جھوٹا الزام لگاتے ہوئے رات گئے اسے رسیوں سے باندھ کراس پر جسمانی تشدد کرنے کے بعد اس نے اپنی والدہ مسمات کز بانو،بہنوں سورٹھ،شازیہ،اور لالی کی مدد سے اس کے سر کے بال بلیڈ سے کاٹ کر اسے گنجا کردیاتھا۔

واقعے کے خلاف مقامی پولیس چوکی سٹھیو واہ گئی وہاں پولیس والوں نے اس سے مبینہ پانچ ہزار روپے رشوت لے کرصرف این سی داخل کی اب شاہ لطیف تھانے کی پولیس مقدمہ درج کرنے کے لئے پچاس ہزار روپے طلب کررہی ہے وہ اتنی بھاری رقم کہاں سے لائے۔ پولیس ملزمان کے خلاف کاروائی کے بجائے انہیں تحفظ فراہم کررہی ہے۔متاثرہ خاتون نے چیف جسٹس سپریم کورٹ۔چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ،سندھ،آئی جی سندھ سے انصاف کی اپیل کی ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 17/10/2017 - 18:01:18

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں