حکومت کا اخلاقی ‘ معاشی اور سیاسی دیوالیہ نکل چکا،
تازہ ترین : 1
حکومت کا اخلاقی ‘ معاشی اور سیاسی دیوالیہ نکل چکا،

حکومت کا اخلاقی ‘ معاشی اور سیاسی دیوالیہ نکل چکا،

فوری نئے عام انتخابات کرائے جائیں ، تحریک انصاف کا دوبارہ مطالبہ شاہد خاقان عباسی کٹھ پتلی وزیر اعظم ہیں ، وہ نواز شریف کے احکامات پرکام کر رہے ہیں، یہ حکومت مزید نہیں چل سکتی ،سٹیٹ بنک کے گورنر بتائیں کہ روزانہ کتنے ارب روپے کے نوٹ چھاپے جا رہے ہیں پاکستان تحریک انصاف کے ترجمان نعیم الحق کی الیکشن کمیشن کے باہر میڈیا سے گفتگو

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 اکتوبر2017ء)پاکستان تحریک انصاف نے ایک مرتبہ پھر ملک میں قبل ازوقت عام انتخابات کرانے کا مطالبہ کرتے او ر شاہد خاقان عباسی کو کٹھ پتلی وزیر اعظم قرار دیتے ہوئے کہاہے کہ حکومت کا اخلاقی ‘ معاشی اور سیاسی دیوالیہ نکل چکاہے ‘ تحریک انصاف اسی لئے انتخابات کا مطالبہ کر رہی ہے کہ ہمیں خدشہ ہے کہ حکومت اب نہیں چل سکتی ‘ شاہد خاقان عباسی کٹھ پتلی وزیر اعظم ہیں‘ وہ جو نواز شریف کے احکامات کے بغیر ابھی تک کام نہیں کر رہے سٹیٹ بنک کے گورنر بتائیں کہ روزانہ کتنے ارب روپے کے نوٹ چھاپے جا رہے ہیں۔

جمعرات کو الیکشن کمیشن کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پی ٹی آئی کے مرکزی ترجمان نعیم الحق نے کہا کہ سٹیٹ بنک کے گورنر سے مطالبہ کرتا ہوں کہ بتائیں کہ روزانہ کتنے ارب روپے کے نوٹ چھاپے جا رہے ہیں۔ آپ کسی بھی بنک میں جائیں پانچ پانچ ہزار کے کروڑوں کی گڈیاں آپ فوراً لے سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کا دیوالیہ نکل چکا ہے ‘ اخلاقی ‘ معاشی اور سیاسی بھی۔

تحریک انصاف اسی لئے نئے انتخابات کا مطالبہ کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں خدشہ ہے کہ یہ حکومت اب نہیں چل سکتی اس کے وزراء کام نہیں کر رہے اور جھوٹ بول رہے ہیں۔ نعیم الحق نے کہا کہ وزیر اعظم کٹھ پتلی وزیر اعظم ہیں جو نواز شریف کے احکامات کے بغیر ابھی تک کام نہیں کر رہے۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان نے فاٹا انضمام کا معاملہ عدالت لے جانے کی ہدایت کی ہے۔ شریر ترین سیاستدان فضل الرحمن نے پھر کچھ آوازیں نکالی ہیں۔ …

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 12/10/2017 - 12:17:29

اپنی رائے کا اظہار کریں