سیکیورٹی اداروں کا تھانہ کوہسار کے مختلف علاقوں میں مشترکہ سرچ آپریشن،
تازہ ترین : 1
سیکیورٹی اداروں کا تھانہ کوہسار کے مختلف علاقوں میں مشترکہ سرچ آپریشن،

سیکیورٹی اداروں کا تھانہ کوہسار کے مختلف علاقوں میں مشترکہ سرچ آپریشن،

100 گھروں،250 سے زائد افراد کو چیک کیا گیا سر چ آ پر یشن کا مقصد اسلام آبا دمیں سکیورٹی کو فول پروف بنانا ،شہریوں کو تحفظ فراہم کرنا ہے ،ایس ایس پی آ پر یشنز ساجد کیا نی

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 اگست2017ء) اسلام آباد پولیس، پا کستا ن رینجرز اور حساس اداروں کے افسران و جو انو ں نے تھا نہ کو ہسار کے علا قوں گو گینہ تلہا ڑ، گو گینہ خو در ، گو گینہ کلا ں اور گردو نواح میںمشترکہ سر چ آ پر یشن کیا اس دوران100گھر وں اور250سے زائد افراد کو چیک کیا گیا۔ایس ایس پی آ پر یشنز اسلام آ باد ساجد کیا نی نے کہا ہے کہ سر چ آ پر یشن کا مقصد اسلام آبا دمیں سکیورٹی کو فول پروف بنانا اور اسلام آباد کے شہریوں کو تحفظ فراہم کرنا ہے تاکہ کوئی شرپسند اپنے مذموم مقصد میں کامیاب نہ ہو سکے۔

تفصیلا ت کے مطا بق گزشتہ روز اسلام آ باد پو لیس ،پا کستا ن رینجر ز اور حساس اداروں کے افسران و جو انو ں نے تھا نہ کو ہسار کے علا قوں گو گینہ تلہا ڑ، گو گینہ خو در ، گو گینہ کلا ں اور گردو نواح میں کیا گیا ، اس سر چ آ پر یشن میں ایس پی سٹی زبیر احمد شیخ، ایس ایچ او تھا نہ کو ہسار ، اسلام آ باد پو لیس ، پا کستا ن رینجر ز اورحساس اداروںکے افسران و جو انو ں نے حصہ لیا، سر چ آپر یشن کے دوران100گھر وں اور250سے زائد افراد کو چیک کیا گیا، سرچ آ پر یشن کے دوران گیا رہ 12رائفلیں ، 03پسٹل ، ایک 7MMرائفل اور ایک 8ایم ایم رائفلیں بھی بر آمد کی گئیں ۔

ایس ایس پی آ پر یشز اسلام آ باد سا جد کیا نی کہا کہ اس سر چ آ پر یشن کا مقصد اسلام آبا دمیں سکیورٹی کو فول پروف بنانا اور اسلام آباد کے شہریوں کو تحفظ فراہم کرنا ہے تاکہ کوئی شرپسند اپنے مذموم مقصد میں کامیاب نہ ہو سکے۔ انہو ں نے تمام ایس ایچ اوز کو ہد ا یت کی ہے کہ وہ سر چ آ پر یشن کوجا ری رکھیں چیکنگ کو مو ثر بنا ئیں اور اپنے علا قوں میں پٹر ولنگ کو مزید سخت کر یں ۔ انہوں نے تمام شہریوں سے بھی اپیل کی کہ وہ اپنے علاقوں میں کہیں بھی کوئی مشکوک سرگرمی یا کوئی مشکوک شخص دیکھیں تو فوراً اسلام آباد پولیس کو اطلاع دیں۔ انہو ں نے مزید کہا کہ شہریو ں کے تعاون کے بغیر شہر کی سکیورٹی کو بہتر بنانا ممکن نہیں ۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 12/08/2017 - 21:18:49

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں