محکمہ اطلاعات میں اربوں روپے کی کرپشن ،شرجیل میمن کی درخواست پر نیب پراسیکیوٹر ..
تازہ ترین : 1

محکمہ اطلاعات میں اربوں روپے کی کرپشن ،شرجیل میمن کی درخواست پر نیب پراسیکیوٹر کو 19اگست کیلئے نوٹس جاری

سابق وزیر اعظم قوم کو اداروں کیخلاف اکسانے کے بجائے قانونی طریقہ اختیار کریں،میاں صاحب نے جو بویا وہی کاٹ رہے ہیں ،سابق وزیر اطلاعات سندھ

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 اگست2017ء)احتساب عدالت نے محکمہ اطلاعات سندھ میں اربوں روپے کی کرپشن سے متعلق ریفرنس میں سابق صوبائی وزیر شرجیل میمن کی درخواست پر نیب پراسیکیوٹر کو19 اگست کے لیئے نوٹس جاری کردیئے ہیں۔ شرجیل میمن نے کہا ہے کہ سابق وزیر اعظم قوم کو اداروں کے خلاف اکسانے کے بجائے قانونی طریقہ اختیار کریں۔ میاں صاحب آج وہی کاٹ رہے جو انہوں نے بویا ہے۔

ہفتہ کو راچی کی احتساب عدالت کے روبرومحکمہ اطلاعات میں اربوں روپے کی کرپشن سے متعلق ریفرنس کی سماعت ہوئی۔ سابق وزیر اطلاعات سندھ شرجیل میمن و دیگر ملزمان عدالت میں پیش ہوئے۔ پراسیکیوٹر نے ملزمان کو دستاویزات کی فراہمی سے متعلق درخواستوں پر دلائل دیئے۔ پراسیکیوٹر نے کہا کہ ملزمان کو قانون کے مطابق تمام دستاویزات فراہم کردی گئیں ہیں۔

ملزمان کی جانب سے اس قسم درخواستیں صرف وقت کا ضیاع ہے تاکہ فرد جرم عائد نہ ہوسکے۔ نیب پراسکیوٹر نے کہا کہ ملزمان کی دستاویزات کی فراہمی کی درخواستین ناقابل سماعت ہیں مسترد کی جائیں۔ سابق وزیر کے وکیل عامر نقوی نے کہا کہ میری درخواست نیب پراسکیوٹر نے نہ پڑھی ہے نہ اس کا جواب دیا ہے۔ قانونی تقاضے پورے کئے بغیر فرد جرم عائد نہیں ہوسکتی۔

نیب کی جانب سے قانونی تقاضے پورے نہیں کئے۔ وکیل شرجیل میمن نے کہا کہ کیا یہ دستاویزات کے چوالیس فولڈر اس وقت نیب چئیرمین کے سامنے تھے جب ریفرنس کی منظور دی گئی۔ یہ جو کمرہ بھر کے نیب نے دستاویزات دی ہیں ان میں کہاں لکھا ہے کہ شرجیل میمن نے کوئی بل پاس کیا۔ عدالت نے شرجیل میمن کی درخواست پر نیب پراسیکیوٹر کو انیس اگست کے لیئے نوٹس جاری کرتے ہوئے سماعت ملتوی کردی۔

شرجیل میمن و دیگر پر محکمہ اطلاعات میں پانچ ارب سے زائد کی کرپشن کا الزام ہے۔ سماعت کے بعد سابق صوبائی وزیر شرجیل میمن نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سب سے پہلے میں سمجھتا ہوں نواز شریف کے ساتھ جو ہورہا اس پر خوشی نہیں ہے۔ جو ان کو طرز سیاست ہے آج خود انہیں سازشوں کا شکار ہو رہے ہیں۔ شرجیل میمن نے کہا کہ جب نواز شریف کی تنخواہ کا معاملہ نہیں آیا تھا تو دو ججز انہیں نا اہل کرچکے تھے۔

انہوں نے کہا کہ لوگوں کو استعمال کرنے کے حوالے سے بتائیں کہ انہیں پیپلزپارٹی کے دور میں انہیں کس نے استعمال کیا۔ شرجیل میمن نے کہا کہ یوسف رضا گیلانی کی نا اہلی ہے شہباز شریف نے مٹھائی بانٹی تھی۔ سابق صوبائی وزیر نے کہا کہ نواز شریف خطرناک کھیل کھیل رہے ہیں۔ میاں صاحب آپ نے تو باہر چلے جانا ہے عوام نے یہی رہنا ہے۔ شرجیل انعام میمن نے کہا کہ نیب کا کالا قانون ختم کرنے کی وجہ دوہرا معیار ہے۔ چئیرمین نیب خود این آئی سی ایل کیس میں ملوث ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 12/08/2017 - 15:40:06

اپنی رائے کا اظہار کریں