ژوب میں بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ کے خلاف شٹر ڈائون ہڑتال
تازہ ترین : 1

ژوب میں بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ کے خلاف شٹر ڈائون ہڑتال

ہسپتالوںمیں ڈاکٹروں کی کمی کو فی الفور دور کیا جائے، وگرنہ دما دم مست قلندر ہو گا، مظاہرین کا خطاب

ژوب (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 جولائی2017ء)ژوب میں بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ، چوری وڈکیتی کی بڑھتی وارداتوں، اور خواتین کے ہسپتال میں گائناکالوجسٹ کی عدم موجودگی کے خلاف آل پارٹیز کی کال پر شہر میں مکمل شٹرڈائون ہڑتال کی گئی،شہرکی تمام دکانیں اورکاروباری مراکز مکمل بندرہے۔ مولانا شمس الدین شہید چوک پر احتجاجی جلسے کا انعقاد کیاگیا۔

جس میں لوگوں نے کثیرتعدادمیں شرکت کی۔جلسے سے خطاب کرتے ہوئے عوامی نیشنل پارٹی کے ضلعی صدرمحمدانورمندوخیل، پاکستان تحریک انصاف کے صدردائودخان مندوخیل،جمعیت علماء اسلام کے ضلعی رہنماء حافظ حضرت گل بابر، جمعیت علماء اسلام نظریاتی کے رہنماء مولوی عبدالحمید مردانزئی،کاکڑ جمہوری پارٹی کے رہنماء حاجی نواز خان کاکڑ،جماعت اسلامی کے رہنماء مولوی فقیر محمد مندوخیل،مسلم لیگ (ن)کے رہنماء اجمل اعوان،پشتونخوامیپ کے رہنماء جمال لالا اورمسلم لیگ (ق) کے رہنماء باز خان مندوخیل نے کہا کہ شہر میں منشیات فروشی اور چوری ڈکیتی کی وارداتوں میں روزبروزاضافہ ہورہاہے۔

لیکن پولیس خاموش تماشائی کا کرداراداکرہی ہے سول ہسپتالوںمیں ڈاکٹروں کی کمی اور غیر حاضری کی وجہ سے عوام شدید مشکلات کا شکارہے ۔فیمیل ہسپتال میں گائناکالوجسٹ اورلیڈی سرجن کی عدم موجودگی کے باعث خواتین کے آپریشن مردڈاکٹرزکرتے ہیں۔ لیکن منتخب نمائندگان عوامی مسائل سے چشم پوشی کررہے ہیں ۔ عوامی مسائل سے نمائندگان بخوبی واقف ہیں۔

ان کی مجرمانہ خاموشی کے باعث آئندہ انتخابات میں ووٹ لینے کے حقدارنہیں ہوں گے۔ مقررین نے کہاکہ شہری علاقوں میں بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ کا سلسلہ حسب سابق جاری ہے۔دیہی علاقے توبجلی سے یکسرمحروم ہیں۔جس سے نہ صرف شدیدگرمی میں عوام کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑتاہے،بلکہ پانی کی بھی شدید قلت ہے۔ مقررین نے مطالبہ کیا۔کہ ڈی پی او ژوب کا فوری طورتبادلہ کیاجائے، ہسپتال میں غیر حاضر ڈاکٹروں کی حاضری کویقینی بنایا جائے،بجلی کی غیراعلانیہ اورطویل لوڈشیڈنگ کا سلسلہ فوری طورختم کیاجائے۔بصورت دیگر عوامی مسائل کوحل کرنے کیلئے بھرپوراحتجاج کیاجائے گا۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 16/07/2017 - 21:20:35

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں