ْمقدمے فیصلوں کیلئے لگتے ہیں کیس ملتوی کرنے کا رواج ختم ہونا چاہیے ،ْجسٹس آصف ..
تازہ ترین : 1
ْمقدمے فیصلوں کیلئے لگتے ہیں کیس ملتوی کرنے کا رواج ختم ہونا چاہیے ..

ْمقدمے فیصلوں کیلئے لگتے ہیں کیس ملتوی کرنے کا رواج ختم ہونا چاہیے ،ْجسٹس آصف سعید کھوسہ

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 جون2017ء)سپریم کورٹ کے سینئر ترین جج جسٹس آصف سعید کھوسہ نے کہا ہے کہ مقدمے فیصلوں کیلئے لگتے ہیں کیس ملتوی کرنے کا رواج ختم ہونا چاہیے۔ پیر کو سپریم کورٹ میں ملزم کی ضمانت سے متعلق کیس کی سماعت جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں بنچ نے کی ،جسٹس آصف سعید کھوسہ نے فوجداری مقدمے میں التوا مانگنے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ میں کیس فیصلے کے لیے لگتے ہیں ، دنیا کی کسی سپریم کورٹ میں کیس ملتوی نہیں ہوتے ، کوئی وکیل ایسا سوچ بھی نہیں سکتا ، کیس ملتوی کرنے کا رواج ختم ہوچکا ہے ، دنیا بھرمیں اگر کوئی وکیل کیس ملتوی کرواناچاہے تو درخواست دیتا ہے ۔
وقت اشاعت : 19/06/2017 - 14:37:55

اپنی رائے کا اظہار کریں