عالمی عدالت انصاف کے عبوری حکم پر بھارتی میڈیا کا واویلا، شاہ زیب خانزادہ نے حقیقت ..
تازہ ترین : 1
عالمی عدالت انصاف کے عبوری حکم پر بھارتی میڈیا کا واویلا، شاہ زیب خانزادہ ..

عالمی عدالت انصاف کے عبوری حکم پر بھارتی میڈیا کا واویلا، شاہ زیب خانزادہ نے حقیقت بیان کر دی

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 19 مئی 2017ء): گذشتہ روز عالمی عدالت انصاف نے کلبھوشن یادیو کی پھانسی پر عملدرآمد کو روکنے کے یے عبوری حکم جاری کیا تھا۔ یہ عبوری حکم آتے ہی بھارتی میڈیا نے اس فیصلے کو بھارت کی جیت اور پاکستان کی شکست قرار دینا شروع کر دیا۔ نجی ٹی وی چینل پر اپنے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے معروف صحافی اور تجزیہ کار شاہ زیب خانزادہ نے کہا کہ بھارت نے عالمی عدالت انصاف کے فیصلے پر جشن منایا لیکن حقیقت اس کے برعکس ہے ۔

جس بات کا بھارت میں جشن منایا تھا ایسا تو کچھ ہوا ہی نہیں۔ انہوں نے کہا کہ آج کے حکم نامے میں عالمی عدالت نے کلبھوشن یادیو کو قونصلر رسائی نہ دینے کی بھارتی درخواست پر عدالت کے دائرہ اختیار کے تعین کے حتمی فیصلے تک سزا پر عملدرآمد سے متعلق عبوری حکم جاری کیا ۔ عدالت کے دائرہ اختیار کو پاکستان نے چیلنج کیا تھا، جس پر عدالت نے حکم دیا کہ عدالت کے دائرہ اختیار کا حتمی تعین ہونے تک پھانسی پر عملدرآمد کو روک دیا جائے۔

عالمی عدالت نے عبوری حکم میں پاکستان سے کہا ہے کہ کلبھوشن کی پھانسی پر عملدرآمد نہ کیا جائے۔ کیونکہ بھارت نے درخواست کی تھی کہ دائرہ کار کے تعین تک پاکستان میں کلبھوشن یادیو تک قونصلر رسائی دئے بغیر ہی پھانسی نہ دے دی جائے۔ اپنے فیصلے میں عدالت نے واضح کہا کہ آج کے حکم کا اثر کسی بھی طرح اس معاملے پر آنے والے حتمی فیصلے پر نہیں ہو گا۔ شاہ زیب خانزاہ نے مزید کیا کہا آپ بھی ملاحظہ کیجئیے:
اس خبر نوں پنجابی وچ پڑھو
وقت اشاعت : 19/05/2017 - 14:58:33

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں