جنریٹر کے باعث کاربن مونو آکسائیڈ گیس پھیلی، جرمن تفتیش کار
تازہ ترین : 1

جنریٹر کے باعث کاربن مونو آکسائیڈ گیس پھیلی، جرمن تفتیش کار

برلن (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 فروری2017ء)جرمن تفتیش کاروں کا کہنا ہے کہ صوبہ باویریا میں ویک اینڈ پر ہلاک ہونے والے ٹین ایجرز گیس کے ایسے جنریٹر کا استعمال کر رہے تھے، جس کے بند کمروں میں استعمال پر پابندی ہے۔ اٹھارہ اور انیس برس کے یہ نوجوان لڑکے اور لڑکیاں ہفتے کے شام بظاہر پارٹی کی خاطر ایک باغیچے میں بنے لکڑی کے ایک کاٹیج میں جمع ہوئے تھے تاہم اگلے دن وہاں سے ان کی لاشیں برآمد ہوئیں۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق پولیس کی تفتیش میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ یہ ہلاکتیں زہریلی گیس کاربن مونوآکسائیڈ کی وجہ سے ہوئیں۔ اسی جنریٹر کو بند کاٹیج میں اس زہریلی گیس کے پھیلاؤ کا سبب قرار دیا گیا ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 02/02/2017 - 20:09:15

اس خبر پر آپ کی رائے‎

متعلقہ عنوان :