دفاتر میں طویل عرصے تک لگاتار کام کرنابے شمار امراض کو دعوت دیتا ہے
تازہ ترین : 1

دفاتر میں طویل عرصے تک لگاتار کام کرنابے شمار امراض کو دعوت دیتا ہے

لندن۔ یکم جنوری (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 01 جنوری2017ء) ایک طبی تحقیق کے مطابق دفاتر میں 8 گھنٹے مسلسل بیٹھا رہنا صحت کے لیے نہایت مضر ہوتا ہے ماہرین نے ان اثرات کو زائل کرنے کے لیے مشورہ دیا ہے کہ اگر ممکن ہوتو ہر گھنٹے اپنی نشست سے اٴْٹھ کر 5 منٹ ضرور چہل قدمی کرنی چاہییں۔ جس سے نہ صرف کام کرنے کی توانائی بڑھے گی بلکہ اعصابی دباؤ میں بھی کمی آئیگی۔

حالیہ سروے سے انکشاف ہوا ہے کہ دن میں کام روک کر کئی بار کھڑے ہونے اور چلنے پھرنے سے کام کا دباؤ زائل ہوتا ہے ، مزاج اچھا اور توانائی بڑھتی ہے، ان چھوٹے چھوٹے کاموں کے اثرات دن بھر رہتے ہیں اور ان سے بھوک کم کرنے میں مدد بھی ملتی ہے۔تحقیقی رپورٹ میں واضح کیا گیا ہے کہ دفتری امور طویل مدت تک مگن رہنے سے ذیابیطس، اعصابی دباؤ، موٹاپا اور دیگر بیماریوں کے خطرات لاحق ہوسکتے ہیں۔ ان اثرات کا جائزہ لینے کے لیے ماہرین نے 30 افراد پر نشست و برخاست کے تین طرائق کا مطالعہ کیا۔ اس سے قبل ان کی صحت، موڈ، توانائی اور بھوک کے بارے میں سوالات اور ٹیسٹ کیے گئے۔
وقت اشاعت : 01/01/2017 - 11:10:20

اس خبر پر آپ کی رائے‎