تعلیمی بورڈز کی طرف سے میٹرک اور انٹرمیڈیٹ کے داخلہ کی لیٹ فیس وصولی کا اقدام لاہور ..
تازہ ترین : 1

تعلیمی بورڈز کی طرف سے میٹرک اور انٹرمیڈیٹ کے داخلہ کی لیٹ فیس وصولی کا اقدام لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج

سیکرٹری تعلیم سے دو ہفتوں میں جواب طلب

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2016ء) تعلیمی بورڈز کی طرف سے میٹرک اور انٹرمیڈیٹ کے داخلہ کی لیٹ فیس وصولی کا اقدام لاہور ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا گیا، عدالت نے سیکرٹری تعلیم سے دو ہفتوں میں جواب طلب کرلیا۔جسٹس سید مظاہر علی اکبر نقوی نے شاہد رانا ایڈووکیٹ کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ آئین کے آرٹیکل پچیس کے تحت مفت تعلیم ریاست کی بنیادی ذمہ داری ہے لیکن حکومت اپنی ا?ئینی ذمہ داری پوری نہیں کر رہی، انہوں نے مزید موقف اختیارکیا کہ پنجاب بھر میں تعلیمی بورڈز لیٹ داخلہ بھجوانے پر فی طالب علم نو ہزار تین سے چھتیس روپے وصول کرتے ہیں جبکہ لیٹ داخلہ کی رجسٹریشن فیس کی ادائیگی بھی کی جاتی ہے ،لیٹ داخلہ فیس اور رجسٹریشن فیس کی وصولی آئین کی خلاف ورزی ہے، انہوں نے استدعا کی کہ تعلیمی بورڈز کو لیٹ داخلہ فیس اور رجسٹریشن فیس کی وصولی سے روکا جائے، ابتدائی سماعت کے بعد عدالت نے نوٹس جاری کرتے ہوئے سیکرٹری محکمہ تعلیم سے دو ہفتوں میں جواب طلب کر لیا۔

(بخت گیر)
وقت اشاعت : 16/11/2016 - 21:18:24

اپنی رائے کا اظہار کریں