بھارتی جارحیت کا نشانہ بننے والے 200 خاندانوں کی نقل مکانی
تازہ ترین : 1

بھارتی جارحیت کا نشانہ بننے والے 200 خاندانوں کی نقل مکانی

زیادہ تر نقل مکانی تحصیل برنالہ کے انتہائی جنوب میں دیکھنے میں آئی جہاں دریائے توی ایل او سی کا کردار ادا کرتا ہے،۔ڈویڑنل کمشنر راجا امجد پرویز

بھمبر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 16 نومبر2016ء) لائن آف کنٹرول کے قریب ضلع بھمبر میں بھارتی جارحیت کا نشانہ بننے والے تقریباً 200 خاندان اپنے گھروں کو چھوڑ کر محفوظ مقامات کی طرف نقل مکانی کرگئے۔ڈویڑنل کمشنر راجا امجد پرویز نے بتایا کہ نقل مکانی تحصیل برنالہ میں سیکٹر چھمب (افتخارآباد) کے دو گاؤں بالیوال اور خیرووال میں دیکھنے میں آئی۔

انہوں نے بتایا کہ گزشتہ روز بھی صبح سے دوپہر تک وقفے وقفے سے فائرنگ کا سلسلہ جاری رہا تاہم کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔واضح رہے کہ اتوار کے روز تحصیل برنالہ کے گاؤں پٹنی (تھب) میں بھارت کی بلا اشتعال فائرنگ کے نتیجے میں 7 پاکستانی فوجی جاں بحق ہوگئے تھے۔تاہم راجا امجد کا کہنا ہے کہ زیادہ تر نقل مکانی تحصیل برنالہ کے انتہائی جنوب میں واقع منور کے ارد گرد دیکھنے میں آئی جہاں دریائے توی ایل او سی کا کردار ادا کرتا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ زیادہ تر لوگ محفوظ مقامات پر اپنے رشتے داروں کے ہاں چلے گئے ہیں اور انتظامیہ محض 32 خاندانوں کے 178 افراد کی دیکھ بھال کررہی ہے۔ ’ان خاندانوں کو عارضی طور پر موئل گاؤں میں تین تعلیمی اداروں کی عمارتوں میں ٹھہرایا گیا ہے تاہم بچوں کے تعلیمی نقصان سے بچنے کے لیے ہم نے دو خیمہ بستیاں قائم کی ہیں جہاں 25، 25 ٹینٹ لگائے گئے ہیں اور جلد انہیں یہاں منتقل کردیا جائے گا‘
وقت اشاعت : 16/11/2016 - 12:19:59

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں