چہلم حضرت امام حسینؓ کے جلوس میں شرکت کے لئے پاس، سٹیکر ڈی آئی جی ٹریفک کے دفتر ..
تازہ ترین : 1

چہلم حضرت امام حسینؓ کے جلوس میں شرکت کے لئے پاس، سٹیکر ڈی آئی جی ٹریفک کے دفتر سے حاصل کئے جا سکتے ہیں

کراچی ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 نومبر2016ء) چہلم حضرت امام حسینؓ کا جلوس نشتر پارک سے روانہ ہو کر حسینیہ ایرانیاں امام بارگاہ کھارادر پر اختتام پذیر ہو گا۔ جلوس میں شرکت کرنے والی گاڑیوں کے لئے اسٹیکر لازمی ہو گا۔ جاری اعلامیہ کے مطابق 21 نومبر 2016ء پیر کے روز چہلم حضرت امام حسینؓ کا جلوس نشتر پارک سے برآمد ہو گا۔ اس سلسلے میں قانون نافذ کرنے والے ادارے، ایمبولینس، ٹائون انتظامیہ، میڈیا اور ایمبولینس سروس کے منتظمین کو کہا گیا ہے کہ وہ جلوس میں شرکت کے لئے اپنی گاڑیوں کا اجازت نامہ (پاس / اسٹیکر) حاصل کرنے کے لئے دفتر ڈی آئی جی پی، ٹریفک کراچی (سیکیورٹی برانچ) گارڈن ہیڈ کوارٹرز، آغا خان سوئم روڈ سے بدھ، جمعرات تک درخواست جمع کروائیں اور 20 نومبر کو اسٹیکر دوپہر 4 بجے کے بعد حاصل کر سکتے ہیں۔

گورنمنٹ ادارے دفتری لیٹر کے ساتھ جبکہ میڈیا اور ایمبولینس کے لئے ادارے کے لیٹر کے ساتھ گاڑیوں کے کاغذات، ڈرائیور کے لائسنس، سی این آئی سی اور2 عدد تصاویر کے ساتھ درخواست جمع کروائیں۔ اجازت نامہ (پاس / اسٹیکر) حاصل کرتے وقت قانون نافذ والے ادارے، ڈسٹرکٹ ایڈمنسٹریشن، ایمبولنس اور میڈیا آرگنائزیشن وغیرہ اپنا اصل کمپیوٹرائز شناختی کارڈ و محکمانہ شناختی کارڈ اور اپنے ادارے کے لیٹر کی کاپی دکھا کر اور اپنے شناختی و محکمانہ کارڈ کی کاپی جمع کرواکر اجازت نامہ حاصل کر سکتے ہیں۔

نیز اس کا ئوٹس، انجمنوں، فلاحی ادارے، سبیل نظر و نیاز کی گاڑیوں کے اسٹیکر حاصل کرنے کے لئے ڈی آئی جی پی ٹریفک کراچی کے نام درخواست جس کے ساتھ مندرجہ ذیل اصل دستاویزات اور تصدیق شدہ فوٹو کاپی منسلک ہوں، اسکاو،ْٹس رابطہ کونسل (ایس آر سی) کے مرکزی دفتر واقع نمائش (رابطہ نمبر -2200074 0313) میں 16 تا 19 نومبر تک جمع کراکے رسید حاصل کریں اور 20 نومبر کو دوپہر 4 بجے کے بعد اسٹیکر اسکائوٹس دفترسے رسید دکھا کر حاصل کریں۔ پاس یا اسٹیکر کے لئے گاڑی کی رجسٹریشن بک کی فوٹو کاپی، ڈرائیونگ لائسنس کی فوٹو کاپی بمعہ 2 عدد ڈرائیور کی تصاویر کے ساتھ قومی شناختی کارڈ کی فوٹو کاپی، انجمن، ادارے یا سبیل کا لیٹر ضروری ہے بصورت دیگر اجازت نامہ (اسٹیکر / پاس) جاری نہیں کیا جائے گا۔
وقت اشاعت : 15/11/2016 - 22:31:08

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں