پی ایچ ایف نے پی سی بی سے ایک کروڑ روپے کا قرض معاف کرنے کا دوبارہ مطالبہ کردیا
تازہ ترین : 1
پی ایچ ایف نے پی سی بی سے ایک کروڑ روپے کا قرض معاف کرنے کا دوبارہ مطالبہ ..

پی ایچ ایف نے پی سی بی سے ایک کروڑ روپے کا قرض معاف کرنے کا دوبارہ مطالبہ کردیا

پی سی بی سے قرض معاف کر ے،پی سی بی اس سے قبل شعیب محمد اور محمد یوسف کو قرض معاف کرچکا ، ایک کروڑ کی رقم پی سی بی کے لیے کوئی بڑی رقم نہیں ،پی سی بی قرض کو گرانٹ میں تبدیل کرے،پی ایچ ایف

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 نومبر2016ء)پاکستان ہاکی فیڈریشن (پی ایچ ایف)نے پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی)سی16سال قبل لیے گئے ایک کروڑ روپے واپس کرنے سے معذوری ظاہر کرتے ہوئے پی سی بی سے قرض معاف کرنے کا مطالبہ کردیا۔پی ایچ ایف نے 16 سال قبل 2000 میں پی سی بی سے ایک کروڑ روپے قرض لیا تھا جو فنڈز کی کمی کے باعث تاحال واپس نہیں کئے گئے۔ پی ایچ ایف کے سیکرٹری شہباز احمد سینئر نے کہا کہ پی سی بی نے فیڈریشن کو قرض واپس کرنے کے لیے خط لکھا ہے۔

شہبازسینیئر نے پی سی بی سے قرض معاف کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے دعوی کیا کہ 'پی سی بی اس سے قبل شعیب محمد کو 3 لاکھ اور محمد یوسف کو 7 لاکھ کا قرض معاف کرچکا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ ایک کروڑ کی رقم پی سی بی کے لیے کوئی بڑی رقم نہیں ہے۔واضح رہے کہ پی سی بی چاہتا ہے کہ پی ایچ ایف رقم قسطوں میں ادا کرے جبکہ قسطوں کی تعداد پر اتفاق نہیں کیا گیا تاہم پی سی بی اس رقم کو دس قسطوں میں حاصل کرنے کا خواہاں ہے۔

دوسری جانب پی ایچ ایف کی خواہش ہے کہ پی سی بی، بنگلہ دیش کرکٹ بورڈ کی طرح اس رقم کو گرانٹ کی میں تبدیل کرے جہاں حکومت کی اعلان کردہ پالیسی کے مطابق بنگلہ دیش کرکٹ بورڈ اپنے منافع کا 5 فی صد قومی کھیل کو ادا کرے گا۔شہباز سینئر نے اس سے قبل حکومت سے مطالبہ کیا تھا کہ قومی کھیل کی بحالی کے لیے خصوصی گرانٹ جاری کی جائے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 15/11/2016 - 20:36:46

اپنی رائے کا اظہار کریں