مباحثے کے بعد بھی ٹرمپ اور ہلیری کے درمیان لفظوں کی جنگ جاری
تازہ ترین : 1

مباحثے کے بعد بھی ٹرمپ اور ہلیری کے درمیان لفظوں کی جنگ جاری

مزید ریکارڈنگز جاری کی گئیں تو ہیلری اور بل کلنٹن کے خلاف حملے تیز دوں گا٬ٹرمپ

واشنگٹن(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 11 اکتوبر2016ء)ہلیری کلنٹن اور ڈونلڈ ٹرمپ کے درمیان دوسرے مباحثے کے بعد بھی تندو تیز بیانات کا سلسلہ جاری ہے۔ ریاست مشی گن کے شہر ڈیٹرائٹ میں ایک انتخابی ریلی سے خطاب میں ہلیری کلنٹن کا کہنا تھا کہ ڈونلڈ ٹرمپ کو مباحثے کے دوران معذرت کرنی چاہیے مگر انہوں نے ہمیشہ کی طرح حملے کرنا جاری رکھا ۔جس پر ٹرمپ نے فوراً ہی ردعمل دیا ۔

پینسلوینا میں ریلی سے خطاب کرتے ہوئے ٹرمپ نے خبر دار کیا کہ اگر ان سے متعلق مزید ریکارڈنگز جاری کی گئیں تو وہ ہیلری اور ان کے شوہر بل کلنٹن کے خلاف حملے تیز کر دیں گے ۔ٹرمپ نے بل کلنٹن کے خراب برتاو کا ذمے دار بھی ہیلری کو ٹھہرا دیا ۔کہا ہیلری کو اپنے شوہر کا علم تھا مگر انہوں نے بل کو روکا نہیں اور الٹا منظر عام پر آکر خواتین سے محبت جتائی۔

ہیلری منافق ہیں۔توقعات کے برعکس دونوں امیدواروں کے درمیان دوسرے مباحثے کو ٹیلی وڑن پر دیکھنے والے ناظرین کی تعداد صرف 6کروڑ 36لاکھ رہی ۔ جبکہ پہلے مباحثے کو 8کروڑ 40لاکھ افراد نے دیکھا تھا ۔اس سے پہلے امریکی میڈیا کے مطابق ایوان نمائندگان کے اسپیکر پال رائن نے ایک کانفرنس کے دوران اپنے ری پبلیکن ساتھیوں کو بتایا کہ وہ ٹرمپ کی جانب سے دیے گئے غیر سیاسی بیانات کا مزید دفاع نہیں کر سکتے کیونکہ ٹرمپ کے باعث بہت سے ووٹرز رنجیدہ ہو چکے ہیں ۔جس کے جواب میں ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے بیان میں کہا کہ رائن اپنا وقت بجٹ کو متوازن بنانے ٬ روزگار کی فراہمی اور غیر قانونی تارکین وطن پر صرف کریں۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 11/10/2016 - 16:53:32

اس خبر پر آپ کی رائے‎

متعلقہ عنوان :