چینی صوبہ جیلن کے موضع ہن چن میں شیر کے بچے کی موجودگی نے دیہاتیوں کو خوفزدہ کردیا ..
تازہ ترین : 1

چینی صوبہ جیلن کے موضع ہن چن میں شیر کے بچے کی موجودگی نے دیہاتیوں کو خوفزدہ کردیا

چانگ چن (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔11 اگست ۔2016ء )ماہرین تحفظ نے چین کے سائبریا کے شیروں کی آبادی میں اضافے کو سراہا ہے تا ہم دیہاتیوں نے جو بلیوں کو ہمسایہ خیال کرتے ہیں اس پر خوش نہیں ہیں ، جولائی کے اواخر میں صوبہ جیلن کے شہر ہن چن کے چھوٹے سے پہاڑی موضع میں معمولات زندگی اس وقت درہم برہم ہو گئے جب ایک جنگلی سائبرین شیر کا بچہ دیہات میں پایا گیا ، کئی دیہاتیوں نے اس بچے کو مکئی کے کھیتوں میں گھومتے ہوئے پایا جبکہ کئی نے اس کے پاؤں کے نشان اپنے گھر کے برآمدوں میں بھی دیکھے تھے ، روس اور ڈی پی آر کے کی سرحدوں کے قریب ہن چن جنگلی شیروں کی قدرتی آماجگاہ ہے ، باسٹھ سالہ ژاؤ یامی نے کہا کہ اس ننے موضع میں پہلی مرتبہ کسی شیر کو داخل ہوتے ہوئے دیکھا ہے ۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 11/08/2016 - 16:27:38

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں