ن لیگ، پی پی پی اور پی ٹی آئی عمران خان گروپ میں بیٹھے ہوئے زیادہ تر سیاستدان قابل ..

ن لیگ، پی پی پی اور پی ٹی آئی عمران خان گروپ میں بیٹھے ہوئے زیادہ تر سیاستدان قابل احتساب ہیں ، تحریک احتساب چلانا ہے تو سب سے خلاف چلانا ہوگی اور احتساب گھر سے شروع کرنا ہوگا ،مسلسل ناکامیوں کے ساتھ عمران خان کو سیاہ اور سفید میں تمیز نہیں رہی

تحریک انصاف (نظریاتی ) کے چیئرمین اختر اقبال ڈار کی میڈیا سے گفتگو

شیخوپورہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔8 اگست ۔2016ء )تحریک انصاف (نظریاتی ) کے چیئرمین اختر اقبال ڈار نے کہا ہے کہ ن لیگ پی پی پی اور پی ٹی آئی عمران خان گروپ میں بیٹھے ہوئے بیشتر سیاستدان قابل احتساب ہیں لہذا تحریک احتساب چلانا ہے تو سب سے خلاف چلانا ہوگی اور احتساب گھر سے شروع کرنا ہوگا مسلسل ناکامیوں کے ساتھ عمران خان کو سیاہ اور سفید میں تمیز نہ رہی ہے اور وہ کبھی بلاول کے ساتھ گٹھ جوڑ کرتے ہیں اور کبھی کرپٹ لوگوں کے ساتھ مل کر اقتدار کیلئے ہر قسم کا الٹا سیدھا کھیل کھیل رہے ہیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے میڈ یا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا اختر ڈار نے کہا کہ عمران خان کے غیر جمہوری غیر ضروری اور منفی اقدامات کے باعث پی ٹی آئی میں نہ تحریک رہی ہے نہ انصاف لہذا تحریک انصا ف کو تباہ کرنے والے عمران خان تحریک احتساب چلانے سے پہلے احتساب اپنے گھرسے کرنا ہوگا ورنہ تحریک احتساب کاحشر بھی تحریک انصاف جیسا ہوگا انہوں نے کہا کہ ماضی میں لاہور سے نہ ایک لاکھ موٹر سائیکل نکلی اور دس لاکھ عوام باہر آئی نہ سول نافرمانی کی کال کامیاب ہوئی نہ ہندی کی ترغیب کامیاب ہوئی اور پارلیمنٹ پی ٹی وی پر حملے بھی کامیاب ہوئے اور نہ ہی گالم گلوچ سے کام بنا نہ ہی جنرل راحیل شریف کی انگلی اٹھی اور صرف ملک کو اربوں روپے کا نقصان پہنچا گالی گلوچ ناچ گانے کا کلچر متعارف ہوا ۔

وقت اشاعت : 08/08/2016 - 18:25:54

اپنی رائے کا اظہار کریں