دہشتگردی پرقابوپانے کیلئے تمام تروسائل بروئے کارلائے جائیں گے،آرمی چیف
تازہ ترین : 1

دہشتگردی پرقابوپانے کیلئے تمام تروسائل بروئے کارلائے جائیں گے،آرمی چیف

چیف جسٹس بلوچستان ہائیکورٹ سے ملاقات ،کوئٹہ میں دہشتگردی کے واقعہ میں انسانی جانوں کے ضیاع پر تعزیت کا اظہار،سول ہسپتال میں زخمیوں کی عیادت کی

کوئٹہ/راولپنڈی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔8 اگست ۔2016ء )آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے کہاہے کہ دہشتگردی پرقابوپانے کیلئے تمام تروسائل بروئے کارلائے جائیں گے،انٹیلی جنس ایجنسیاں دہشتگردی کے واقعات میں ملوث افراداوران کے مددگاروں کونشانہ بنانے کیلئے ملک بھرمیں جہاں چاہیں کارروائی کریں،خیبرپختونخوا میں شکست کھانے کے بعد دہشتگردبلوچستان کی جانب توجہ مرکوز کررہے ہیں، دہشتگردوں کا ہدف چین پاکستان اقتصادی راہداری ہے،آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے پیرکو چیف جسٹس بلوچستان ہائیکورٹ سے ملاقات کر کے کوئٹہ میں دہشتگردی کے واقعہ میں انسانی جانوں کے ضیاع پر تعزیت کا اظہار کیا اور سول ہسپتال میں زخمیوں کی عیادت کی ۔

آئی ایس پی آر کے مطابق چیف آف آرمی سٹاف جنرل راحیل شریف نے بلوچستان ہائیکورٹ کا دورہ کیا اور چیف جسٹس بلوچستان ہائیکورٹ اور بلوچستان پینل آف ججز کے ساتھ کوئٹہ میں دہشتگردی میں قیمتی انسانی جانوں کے ضیاع پر تعزیت کا اظہار کیا آرمی چیف نے سول ہسپتال کا بھی دورہ کیا اور زخمیوں سے یکجہتی کا اظہار کیا ۔ دھماکے میں شدید زخمی ہونیوالوں کو سی ایم ایچ منتقل کر نے کے علاوہ دو زخمیوں کو انکی تشویش ناک حالت کے پیش نظر کراچی منتقل کردیاگیا ہے جبکہ فوجی طیارے کے ذریعے بیس دیگرشدیدزخمیوں کو مختلف شہروں کے ہسپتالوں میں بھجوایاگیاہے۔

آرمی چیف نے کوئٹہ میں سیکیورٹی کے حوالے سے اجلاس کی صدارت کی جس میں وزیراعلیٰ اورچیف سیکرٹری بلوچستان کے علاوہ کمانڈرجنوبی کمانڈ نے شرکت کی۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے جنرل راحیل شریف نے کہاکہ خیبرپختونخوا میں شکست کھانے کے بعد دہشتگرد بلوچستا ن کی جانب توجہ منتقل کررہے ہیں،دہشتگردوں کا ہدف چین پاکستان اقتصادی راہداری ہے۔پاک فوج کے سربراہ نے واضح کیا کہ صورتحال کو کنٹرول کرنے کیلئے تمام تروسائل بروئے کارلائے جائیں گے انہوں نے کہاکہ سپیشل کومبنگ آپریشنز کے احکامات جاری کردیئے گئے ہیں۔ دہشتگردی کے ان واقعات میں ملوث افراد سے کسی بھی طرح سے تعلق رکھنے والوں کونشانہ بنانے کیلئے انٹیلی جنس ایجنسیاں ملک بھرمیں جہاں چاہیں کارروائی کریں۔

وقت اشاعت : 08/08/2016 - 18:11:23

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں