ایمنسٹی انٹرنیشنل نے ترکی کے ساتھ پناہ گزینوں کے متعلق معاہدے کیلئے یورپی رہنماوٴں ..
تازہ ترین : 1

ایمنسٹی انٹرنیشنل نے ترکی کے ساتھ پناہ گزینوں کے متعلق معاہدے کیلئے یورپی رہنماوٴں پر دوہرے معیاربرتنے کا الزام لگادیا

واشنگٹن (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔19 مارچ۔2016ء)انسانی حقوق کی عالمی تنظیم ایمنسٹی انٹرنیشنل نے ترکی کے ساتھ پناہ گزینوں کے متعلق معاہدے کیلئے یورپی رہنماوٴں پر دوہرے معیاربرتنے کا الزام لگایا ہے۔میڈیا رپورٹ کے مطابق ایمنسٹی انٹرنیشنل نے کہا کہ اس معاہدے نے پناہ گزینوں کے عالمی بحران سے یورپی یونین کے منھ پھیرنے کے سخت رویے کو واضح کر دیا ہے۔

منصوبے کہ تحت جو پناہ گزین یونان کے ساحل پر وارد ہوں گے اگر پناہ حاصل کرنے کے ان کے دعوؤں کو مسترد کر دیا گیا تو انھیں ترکی واپس بھیج دیا جائیگا اور اس کے بدلے ترکی کو امداد اور سیاسی مراعات ملیں گیں۔یورپ اور وسط ایشیا کیلئے ایمنسٹی انٹرنیشنل کے ڈائرکٹر جان ڈلہاوٴزین نے کہا کہ یورپی یونین کے ذریعے بین الاقوامی اور یورپی قوانین کی پاسداری کے عہد کے تحت یورپ میں پناہ گزینوں کے تحفظ کے قانون کو شیرینی میں بجھی ہوئی زہر کی گولی کی طرح کھانے پر مجبور کیا گیا ۔

انھوں نے کہاکہ اتوار سے جس طرح یونان کے جزائر پر آنے والے تمام غیر مستقل پناہ گزینوں کو ترکی بھیجنے کا معاہدہ کیا گیا وہ بین الاقوامی قوانین کی ذمہ دارانہ پاسداری کی ضمانت نہیں ۔ڈلہاوٴزین نے کہاکہ ترکی پناہ گزینوں کیلئے محفوظ ملک نہیں ہے اور کسی بھی پناہ گزین کو ان کے دعوے کی بنیاد پر واپس بھیجنا غلط ہے، غیر قانونی اور غیر اخلاقی ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 19/03/2016 - 12:29:49

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں