سال 2014 میں ایران کے ساتھ تجارت میں 80 کروڑ ڈالر کے گھپلے کا انکشاف ہوا ہے ‘ پاکستان ..
تازہ ترین : 1

سال 2014 میں ایران کے ساتھ تجارت میں 80 کروڑ ڈالر کے گھپلے کا انکشاف ہوا ہے ‘ پاکستان بزنسل کونسل

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔17 مارچ۔2016ء)پاکستان بزنس کونسل نے دعویٰ کیا ہے کہ سال 2014 میں ایران کے ساتھ ہوئی تجارت میں 80 کروڑ ڈالر کا گھپلا نظر آتا ہے ۔پاکستان بزنس کونسل کے مطابق ایران پر سے تجارتی پابندیاں ہٹنے کے بعد پاک ایران تجارت کو فروغ مل سکتا ہے ۔ اس حوالے سے دونوں ممالک کے لیے ضروری ہے کہ ٹریڈ ہونے والی اشیا کی مالیت کا درست اندازہ لگاتے ہوئے انڈر انوائسنگ کے ناسور کو ختم کیا جائے ۔

سال 2014 میں ایران کے مطابق 84 کرور ڈالر مالیت کی اشیا پاکستان نے خریدی لیکن پاکستانی کسٹمز کے مطابق ایران سے امپورٹ ہونے والی مصنوعات کی مالیت ساڑھے 18 کروڑ ڈالر ہے ۔اسی طرح ایران کہتا ہے کہ اس نے پاکستانی تاجروں سے سال 2014 میں ہی 26 کروڑ ڈالر مالیت کی مصنوعات خریدی جبکہ پاکستان کے ایکسپورٹ کے اعداد و شمار کے مطابق ایران کو بیچے گئے سامان کی مالیت4 کروڑ ڈالر کے قریب ہے ۔اس طرح 80 کروڑ ڈالر کی تجارت ریکارڈ میں نہ آنے سے قومی خزانے کو ڈیوٹیز کی مد میں نقصان پہنچا ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 17/03/2016 - 15:12:00

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں