منافقت کی سیاست کے سرخیل مولانا فضل الرحمان دین فروشی میں مہارت رکھتے ہیں، پیر ..
تازہ ترین : 1

منافقت کی سیاست کے سرخیل مولانا فضل الرحمان دین فروشی میں مہارت رکھتے ہیں، پیر معصوم نقوی

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔16 مارچ۔2016ء)جمعیت علما پاکستان نیازی کے سربراہ قائد اہل سنت پیر سید محمد معصوم حسین نقوی نے واضح کیا ہے کہ مولانا فضل الرحمان منافقت کی سیاست کے سرخیل ہیں جو باقی مذہبی جماعتوں کو بیچنے اور دین فروشی میں مہارت رکھتے ہیں۔انہوں نے جماعت اسلامی کو بھی رام کرلیا ہے، سراج الحق اب مولانا کے نرغے میں ہیں۔

پیر اعجاز ہاشمی انہیں ،مولانا شاہ احمد نورانی کی طرح کا قائد دیکھنا چاہتے ہیں۔ صحافیوں سے جمعیت سیکرٹریٹ میں غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ مذہبی جماعتوں کی سیاست سے دوغلہ پن ختم کئے بغیر مطلوبہ نتائج حاصل نہیں کئے جاسکتے ۔جے یو آئی کے سربراہ اب متحدہ مجلس عمل کی سربراہی کے خواب دیکھ رہے ہیں، جس کے لئے چند ہمنوا تیار بیٹھے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مولانا کو جب بھی وزیر اعظم سے ملاقات کی حاجت ہوتی ہے ، وہ دوسری جماعتوں سے مل کر حکومت پر دباو بڑھاتے ہیں۔امت کا نام استعمال کرکے ہر حکمران کے ساتھ مل بیٹھنے کو ترجیح دیتے ہیں۔مگر افسوس کی بات ہے کہ مولانا کی کی منافقت کی سیاست سے سبھی آگا ہ ہوتے ہوئے بھی ، ان کے ساتھ بیٹھتے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ مذہبی جماعتوں کے منصورہ میں ہونے والے اجلاس سے ایک دن پہلے ہمیشہ حکمرانوں کی شفقت کی عادی مذہبی شخصیات کو وزیر قانون پنجاب رانا ثنا اللہ خان نے بلواکر حقوق نسواں بل کی حمایت میں پریس کانفرنس کروائی اور ان میں لفافے بھی تقسیم کئے۔

ضمیر فروشوں نے نذرانے کے طور پر لے لئے اور باضمیروں نے انکار کردیا ۔ مگر حکومت مذہبی طبقے کو تقسیم کرنے میں کامیاب ہوگئی۔ دین فروشوں نے درباری ملاں بننے کے شوق میں علما کی توہین کی ہے۔اس پر تمام اہل سنت جماعتوں کو سوچنا چاہیے کہ وہ دہشت گردوں کے حامیوں کی کب تک حمایت کرتے رہے گے ۔ ایک طالبان دہشت گردوں کے باپ کہلاتے ہیں تو دوسرے دہشت گردوں کو شہید اور فوجی جوانوں کو شہید نہ ماننے والوں کی جماعت ہے۔

وقت اشاعت : 16/03/2016 - 16:45:13

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں