برنائی کی سرکاری فضائی کمپنی کے خواتین کے عملے نے سعودی عرب تک پروازکر کے نئی تاریخ ..
تازہ ترین : 1

برنائی کی سرکاری فضائی کمپنی کے خواتین کے عملے نے سعودی عرب تک پروازکر کے نئی تاریخ رقم کر دی

خواتین پائلٹس نے برونائی سے سعودی عرب کے شہر جدہ تک پرواز کی ‘بوئنگ 787 ڈریم لائنر طیارہ استعمال کیا گیا

جدہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔16 مارچ۔2016ء)برونائی کی سرکاری فضائی کمپنی رائل برونائی ایئرلائنز کے خواتین پر مشتمل عملے نے ایک نئی تاریخ رقم کرتے ہوئے اپنی پہلی پرواز سعودی عرب تک کی ہے جہاں خواتین کو گاڑی چلانے کی اجازت نہیں ہے۔ان خواتین پائلٹس نے برونائی سے سعودی عرب کے شہر جدہ تک پرواز کی اور اس کے لیے بوئنگ 787 ڈریم لائنر طیارہ استعمال کیا گیا۔

یہ سنگ میل انھوں نے برونائی کے قومی دن کے موقع پر حاصل کیا جب ملک کی آزادی کا جشن منایا جارہا تھا۔پرواز کی کپتان شریفہ زرینہ تھیں ‘ ان کی معاونت سینئر فرسٹ آفیسرز سریانہ نوردین اور ڈی کے نادیہ پی جی خشیم نے کی۔کپٹن زرینہ نے ہوابازی کی تربیت برطانیہ سے حاصل کی تھی اور دسمبر 2013 میں وہ لندن کے ہیتھرو ہوائی اڈے سے بوئنگ 787 ڈریم لائنر کی پرواز کرنے والی رائل برونائی ایئرلائنز کی پہلی پائلٹ بن گئی تھیں۔

انھوں نے 2012 میں اخبار دی برونائی ٹائمز کو بتایا تھا کہ پائلٹ ہونے کے ناطے بہت سارے لوگ انھیں مردوں کا پیشہ سمجھتے ہیں۔’ایک عورت ‘ایک برونائین عورت ہونے کے ناطے یہ ایک بہت بڑا اعزاز ہے۔ یہ نوجوان نسل یا خاص طور پر لڑکیوں کو یہ واقعی ظاہر کرتا ہے کہ جو خواب وہ دیکھتے ہیں وہ اسے حاصل کر سکتے ہیں۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 16/03/2016 - 13:57:44

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں