پاکستان نے بھارت کو بڑی دہشتگردی سے بچا لیا، نیشنل سیکیورٹی ایڈوائزر کی جانب سے ..
تازہ ترین : 1

پاکستان نے بھارت کو بڑی دہشتگردی سے بچا لیا، نیشنل سیکیورٹی ایڈوائزر کی جانب سے دہشتگردوں کی اطلاع درست ثابت ہوئی

نئی دہلی(ا ردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین-انٹرنیشنل پریس ایجنسی۔16مارچ۔2016ء)پاکستان نے بھارت کو بڑی دہشتگردی سے بچا لیا، نیشنل سیکیورٹی ایڈوائزر کی جانب سے دہشتگردوں کی اطلاع درست ثابت ہوئی، بھارتی سیکیورٹی فورسز نے دس میں سے تین دہشتگردوں کو ہلاک کردیا، باقیوں کی بھی نشاندہی ہوگئی۔بھارتی حکومتی ذرائع کے مطابق بھارت میں داخل ہونے والے دس مبینہ دہشتگردوں میں سے تین کو ہلاک کردیا گیا ہے،پا کستان کے سیکیورٹی ایڈوائزر ناصر خان جنجوعہ نے کچھ روز قبل اپنے بھارتی ہم منصب اجیت دیول کو اطلاع دی تھی کے گجرات کے راستے دس کے قریب دہشتگرد بھارت میں داخل ہوئے ہیں۔

جسکے بعد بھارت نے دہلی سمیت سیکیورٹی ہائی الرٹ کردی گئی تھی۔بھارتی سیکیورٹی فورسز کے مطابق دہشتگردوں نے دہلی کا بھی سفر کیا، سیکیورٹی فوروز نے دعوٰی کیا کہ تین دہشتگردوں کو مار دیا گیا ہے جبکہ انہیں بقیہ ملزمان کی بھی معلومات ہیں۔بھارتی جریدے ”دی ہندو“ نے وزارت داخلہ کے ایک اعلی افسر کے حوالے سے بتایا کہ دہشت گردوں کی مبینہ در اندازی سے متعلق پاکستان کے مشیر برائے قومی سلامتی نصیر خان جنجوعہ کی فراہم کردہ معلومات درست ثابت ہوئیں۔

انہوں نے تفصیلات میں جائے بغیر بتایا کہ دس میں سے تین دہشت گردوں سے نمٹا جا چکا ہے۔افسر کے مطابق، تصدیق کا عمل جاری ہونے کی وجہ سے حکام تینوں دہشت گردوں سے متعلق مزید معلومات شیئر کرنے سے قاصر ہیں۔انہوں نے بتایا کہ یہ دہشت گردپچھلے ہفتے مہا شیو راتری جشن سے قبل گجرات کے مشہور سومناتھ مندر پر حملے کا منصوبہ رکھتے تھے۔ہم نے مزید سات دہشت گردوں کا پتہ چلایا ہے اور ان کا کسی تیسرے ملک سے تعلق ہو سکتا ہے۔

اخبار کے مطابق نصیر جنجوعہ نے اپنے ہندوستانی ہم منصب اجیت دیول سے معلومات کے تبادلے میں مبینہ طور پر بتایا تھا کہ پاکستان کے پاس لشکر طیبہ یا جیش محمد کے دس دہشت گردوں سے متعلق اطلاعات ہیں۔دوسری جانب عالمی نشریاتی اداروں نے کہا ہے کہ انڈین سیکیورٹی ایجنسیوں نے اس خفیہ اطلاع پر کام کرتے ہوئے پتہ چلایا کہ یہ دہشت گرد دہلی پہنچنے میں کامیاب ہو چکے ہیں۔دہلی پولیس ذرائع نے کہا تھا کہ انہیں پتہ چلا ہے کہ یہ دہشت گرد بازاروں اور شاپنگ مالز پر حملہ کر سکتے ہیں۔انڈیا گیٹ، راشراپتی بھون اور ریلوے اسٹیشنز سمیت دہلی کی تمام اہم تنصیبات پر ہائی الرٹ ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 16/03/2016 - 12:14:54

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں