اقتصادی راہداری منصوبوں اورتاجکستان کے ساتھ مواصلاتی رابطے قائم ہونے سے خطے ..
تازہ ترین : 1

اقتصادی راہداری منصوبوں اورتاجکستان کے ساتھ مواصلاتی رابطے قائم ہونے سے خطے کی معیشت پردوررس اثرات مرتب ہوں گے ،نوازشریف

وزیراعظم نوازشریف اورتاجک صدر نے دونوں ملکوں کوملانے کیلئے سڑکوں کے 3منصوبوں کی اصولی منظوری دیدی

مری(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔13 نومبر۔2015ء)وزیراعظم محمدنوازشریف نے کہاہے کہ پاک چین اقتصادی راہداری کے منصوبوں اورتاجکستان کے ساتھ مواصلاتی رابطے قائم ہونے سے خطے کی معیشت پردوررس اثرات مرتب ہوں گے ۔جمعہ کے روزمری میں وزیراعظم محمدنوازشریف اورتاجکستان کے صدرامام علی رحمانوف کودی جانے والی بریفنگ میں دونوں رہنماؤں نے پاکستان ،تاجکستان کوملانے کیلئے سڑکوں کے 3منصوبوں کی اصولی منظوری دیدی ۔

پاکستان اورتاجکستان کے درمیان رابطے کے فروغ کیلئے پرعزم دونوں ممالک کی قیادت کے درمیان مری کے گورنرہاؤس میں تفصیلی ملاقات ہوئی ۔تاجکستان کے صدرکے حالیہ دورہ پاکستان کے دوران وزیراعظم محمدنوازشریف اورصدرامام علی رحمان کے درمیان یہ دوسری ملاقات تھی ،دونوں رہنمااکٹھے مری کے گورنرہاؤس پہنچے جہان این ایچ اے کے چیئرمین شاہداشرف تارڑنے تفصیلی بریفنگ دی ،ملاقات میں دونوں ممالک کے درمیان رابطوں کے فروغ کے حوالے سے مختلف آپشنزپرمشتمل بنیادی ڈھانچے کے متعددمنصوبے پیش کئے گئے ،وزیراعظم اورتاجک صدرامام علی رحمانوف نے دونوں ممالک کے درمیان رابطوں کے حوالے سے شاہراہوں کے مختلف منصوبوں کی اصولی منظوری دی ،جن میں گوادرسے پشاور،کابل اورقندوزکے ذریعے دوشنبے تک شاہراہ ،خنجراب ،کلاسومرغیب شاہراہ ،چترال اشکام دوشنبے شاہراہ شامل ہیں ۔

ملاقات میں معاون خصوصی طارق فاطمی نے علاقائی سلامتی سے متعلق امورپربریفنگ دی ،وزیراعظم نے کہاکہ تاجکستان کے ساتھ علاقائی رابطوں کے فروغ اورپاک چین اقتصادی راہداری جیسے منصوبے پورے خطے کی تقدیربدل کررکھ دیں گے ،وزیراعظم نے کہاکہ ان منصوبوں سے خطے کی معیشت پربھی گہرے اثرات مرتب ہوں گے ۔صدرامام علی نے پاکستان میں جاری بنیادی ڈھانچے کے بڑے منصوبوں کوسراہا،ملاقات میں تاجک صدرنے مجوزہ منصوبوں پرعملدرآمدکے حوالے سے اپنے مکمل تعاون کایقین دلایاپاکستان اورتاجکستان باہمی تجارت میں اضافہ اورعلاقائی رابطوں کافروغ چاہتے ہیں

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 13/11/2015 - 23:20:46

اپنی رائے کا اظہار کریں