بھارتی وزیراعظم کی توجہ ملکی مسائل کی بجائے گھومنے پھرنے پر مرکوز،اپنے دور حکومت ..
تازہ ترین : 1

بھارتی وزیراعظم کی توجہ ملکی مسائل کی بجائے گھومنے پھرنے پر مرکوز،اپنے دور حکومت کے پہلے 18ماہ کے دوران 30 غیر ملکی دورے کرڈالے

نئی دہلی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔12 نومبر۔2015ء)بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کی توجہ ملکی مسائل کی بجائے بیرون ممالک دوروں پر مرکوز ہے ،مودی نے 18ماہ کے دوران 30 غیر ملکی دورے کیے۔بھارتی میڈیا کے مطابق برطانیہ سمیت بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کا یہ 30واں بیرونی دورہ ہے اور اس طرح غیر ملکی دوروں کے 72 دن مکمل ہو جائیں گے۔بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی برطانیہ کے تین روزہ دورے کے لیے جمعرات کی صبح دلی سے لندن کے روانہ ہوئے۔

وزیر اعظم کی حیثیت سے 18 ماہ کی مدت میں مودی کا یہ اب تک کا 28 واں بیرونی دورہ ہے۔نریندر مودی نے 26 مئی 2014 کو بھارت کے وزیر اعظم کا عہدہ سنبھالا تھا۔ان 534 دنوں میں سے (11 نومبر تک) اب تک وہ بیرونی ممالک کے کل 29 دورے کر چکے ہیں۔ انھوں نے مجموعی طور پر کل 69 دن بیرونی ممالک میں گزارے ہیں۔جن ممالک کا مودی نے دو بار دورہ کیا ہے وہ امریکہ اور پڑوسی ملک نیپال ہیں۔

اگر برطانیہ کی اس سفر کو بھی اس فہرست میں شامل کر لیا جائے تو بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کے 30 بیرونی دورے ہو جائیں گے اور اس طرح غیر ملکی دوروں کے 72 دن مکمل ہو جائیں گے۔نریندر مودی 12 سے 14 نومبر تک برطانیہ کے دورے پر ہیں۔ اس دوران وہ برمنگھم میں وہ بھارتی نژاد لوگوں سے خطاب بھی کریں گے۔ریاست بہار کے اسمبلی انتخابات میں بی جے پی کی شکست اور اپوزیشن اتحاد کی کامیابی کے بعد مودی کا یہ پہلا غیر ملکی دورہ ہے۔

ستمبر میں دلی کے پاس ہی دادری میں ایک شخص، محمد اخلاق کو گائے کا گوشت کھانے کی محض افواہ پر قتل کر دیا گیا تھا جس کے بعد سے ملک میں فرقہ وارانہ کشیدگی پر بحث چھڑی ہوئی ہے۔اس مسئلے پر مودی نے ایک طویل خاموشی اختیار کی اور اس پس منظر میں مودی کا یہ دورہ اہمیت کا حامل ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 12/11/2015 - 23:16:48

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں