کرنسی سکینڈل میں ماڈل ایان علی پر ایک بار پھر فرد جرم عائد نہ ہو سکی‘ سماعت 19نومبر ..
تازہ ترین : 1
کرنسی سکینڈل میں ماڈل ایان علی پر ایک بار پھر فرد جرم عائد نہ ہو سکی‘ ..

کرنسی سکینڈل میں ماڈل ایان علی پر ایک بار پھر فرد جرم عائد نہ ہو سکی‘ سماعت 19نومبر تک ملتوی

راولپنڈی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔12 نومبر۔2015ء) ماڈل ایان کرنسی سمگلنگ کیس کی سماعت 19 نومبر تک ملتوی کر دی گئی۔ راولپنڈی کرنسی سمگلنگ کیس میں ماڈل ایان علی کسٹم عدالت میں پیش نہ ہوئیں۔ ایان علی کے وکیل نے عدالت سے استدعا کی کہ ایان علی بیمار ہیں اس لئے حاضری سے استثنا دیا جائے۔ عدالت نے کہا کہ اگر ملزمہ بیمار ہیں تو میڈیکل سرٹیفکیٹ پیش کیا جائے۔

کسٹم کے وکیل نے کہا کہ ملزمہ بہانا کر رہی ہیں۔ عدالت نے کیس کی سماعت 19 نومبر تک ملتوی کرتے ہوئے ماڈل ایان علی کو اگلی پیشی پر حاضری یقینی بنانے کی ہدایت کر دی۔ اس سے قبل ماڈل ایان علی نے پاسپورٹ واپسی کے لئے کسٹم عدالت میں درخواست دائر کر دی۔ درخواست میں موقف اپنایا ہے کہ اہم دورے پر بیرون ملک جانا ہے اس لئے پاسپورٹ واپس کیا جائے۔

ایان علی کی درخواست پر سماعت کچھ دیر بعد ہو گی۔ واضح رہے کہ آج انسداد سمگلنگ و کسٹمز کی خصوصی عدالت کے جج رانا آفتاب احمد خان ماڈل ایان علی کی 5لاکھ 6800 امریکی ڈالر کی بیرون ملک سمگلنگ پر کسٹمز کی جانب سے نئی ایف آئی آر کے اندراج اور ایان علی پر فرد جرم عائد کرنے کی کارروائی کا آغاز کرنا تھا۔گذشتہ سماعت کے دوران خصوصی عدالت کے جج رانا آفتاب احمد خان نے ایان علی کی بریت کی درخواست خارج کر تے ہوئے مزید سماعت 12نومبر تک ملتوی کر تے ہوئے حکم دیا تھا۔

اس سے قبل ماڈل ایان علی نے ہائی کورٹ میں اپنی بریت کی درخواست دائر کر دی۔ ماڈل ایان علی نے درخواست میں موقف اپنایا ہے کہ ٹرائل کورٹ کا بریت سے متعلق فیصلہ حقائق کے برعکس ہے۔ ماڈل ایان علی نے درخواست میں موقف اپنایا ہے کہ میرے خلاف کوئی ثبوت نہیں بری کیا جائے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 12/11/2015 - 11:59:15

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں