سعودی عرب میں ملازمہ کا 3 سالہ بچے کا سر تن سے جدا کرنے کی کوشش
تازہ ترین : 1
سعودی عرب میں ملازمہ کا 3 سالہ بچے کا سر تن سے جدا کرنے کی کوشش

سعودی عرب میں ملازمہ کا 3 سالہ بچے کا سر تن سے جدا کرنے کی کوشش

ریاض(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار.11 نومبر 2015 ء) سعودی عرب میں ملازمہ 3 سالہ بچے کا سر تن سے جدا کرنے کی کوشش میں گرفتار کرلی گئی ہے۔ تفصیلات کے مطابق سعودی عرب میں ایک ایتھوپین نژاد ملازمہ کو 3 سالہ بچے کا سر تن سے جدا کرنے کی کوشش میں حراست میں لے کیا گیا ہے۔ مذکورہ ملازمہ نے جن والدین کے 3 سالہ بچے کا سر تن سے جدا کرنے کی کوشش کی، ان کے گھر میں اس نے اس واقعے کے 5 دن پہلے ہی ملازمت شروع کی تھی۔

ملازمہ کی جانب سے جب بچے پر سوتے ہوئے حملہ کیا گیا تو اس کی چیخ پکار سے اس کی والدہ فوری کمرے میں آئیں اور بمشکل ملازمہ کو قابو میں کرنے کے بعد اپنے بچے کو لے کر گلی کی جانب مدد کیلئے بھاگیں۔ ایک ڈرائیور کی جانب سے بروقت مدد فراہم کرنے پر خاتون اپنے بچے کو لے کر قریبی ہسپتال پہنچیں اور ان کا بچہ موت کے منہ میں جانے سے بال بال بچ گیا۔ بچہ اس وقت ہسپتال میں زیر علاج ہے اور ڈاکٹرز کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ شدید زخموں کے باوجود بچے کا بچ جانا کسی معجزے سے کم نہیں ہے۔

اس خبر کا حوالہ

وقت اشاعت : 11/11/2015 - 20:55:46

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں