ناراض ماں نے کفن میں لپٹی بیٹی کو معاف کرنے سے انکار کر دیا
تازہ ترین : 1
ناراض ماں نے کفن میں لپٹی بیٹی کو معاف کرنے سے انکار کر دیا

ناراض ماں نے کفن میں لپٹی بیٹی کو معاف کرنے سے انکار کر دیا

سعودی عرب(اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار. 11 نومبر 2015ء): سعودی خاتون نے کفن میں لپٹ اپنی بیٹی کو معاف کرے سے انکار کر دیا. تفصیلات کے مطابق ایک سعودی خاتون نے بیٹی کے جنازے پر جانے کے لیے ہر کوشش کر مسترد کر دیا . خاتون کی مرحومہ بیٹی نے اپنی ماں کی مرضی کے خلاف اپنے سے بڑی عمر کے شخص سے شادی کر لی تھی جس پر اس کی ماں اسے سے ناراض ہو گئی اور جنازے پر جانےا ور اپنی بیٹی کو مرنے کے بعد بھی معاف کرنے سے انکار کر دیا.

عربی زبان کے روزنامہ ”اوکاز“ کے مطابق خاتون نے جب بیٹی کے جنازے میں شریک ہونے کے لیےاس کے خاوند کے گھر جانے سے انکار کیا تو تمام اہل خانہ نے میت کو ماں ہی کے گھر لانے کا فیصلہ کیا لیکن اس کے باوجود سعودی خاتون نے اپنی مرحومہ بیٹی کا چہرہ تک دیکھنے سے انکار کر دیا. تاہم سعودی خاتون کی رہائش سے متعلق نہیں بتایا گیا اور نہ ہی بیٹی کی عمر سے آگاہ کیا گیا البتہ خاتون کی بیٹی کی موت متعدد بچوں کو جنم دینے کے بعد کینسر کے باعث ہوئی.

اس خبر کا حوالہ

وقت اشاعت : 11/11/2015 - 12:07:57

قارئین کی رائے :

اپنی رائے کا اظہار کریں