گوجرانوالہ پرانی کاروں کیلئے بہترین قیمت والا شہر قرار،وفاقی دارالحکومت کارخریدنے ..
تازہ ترین : 1
گوجرانوالہ پرانی کاروں کیلئے بہترین قیمت والا شہر قرار،وفاقی دارالحکومت ..

گوجرانوالہ پرانی کاروں کیلئے بہترین قیمت والا شہر قرار،وفاقی دارالحکومت کارخریدنے کیلئے مہنگا ترین شہروں میں شامل

کاروں کی خرید وفروخت میں کراچی کا پہلا نمبر ہے لیکن اس کے باوجودیہاں کار خریدنااتنا سستا نہیں جتنا باقی شہروں میں ہے،’’کارمودی‘‘

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔10 نومبر۔2015ء)مختلف علاقوں اور شہروں میں پرانی گاڑیوں کی قیمتیں کس طرح مختلف ہیں پر ایک ریسرچ کی گئی ہے جس میں گوجرانوالہ کو پرانی کاروں کے لئے بہترین قیمت والا شہر قراردیا گیا ہے ۔گاڑیوں کی فوری آن لائن خرید وفروخت ممکن بنانے والے ادارے’’کارمودی‘‘نے ماڈل2000سے2014تک کی کاروں کی مختلف علاقوں میں فروخت پر تحقیق کی ،اس ریسرچ میں سو سے زائد علاقوں کو شامل کیا گیا، اس تحقیق کے مطابق کاروں کی سب سے زیادہ مسابقتی قیمت والا شہر گوجرانوالہ قرارپایاجہاں اوسطً ایک کار998kمیں دستیاب ہوتی ہے،اس کے بعد ملتان1,151mاور راولپنڈی 1,151mپر آتے ہیں ۔

اس تحقیقی کے مطابق وفاقی دارالحکومت اسلام آباد کارخریدنے کیلئے مہنگا ترین شہرہے جہاں موجودہ موجودہ اوسط قیمت1,555mروپے طلب کی جاتی ہے،پاکستان کا سب سے بڑا شہر ہونے کے ناطے کاروں کی خرید وفروخت میں کراچی کا پہلا نمبر ہے لیکن اس کے باوجودیہاں کار خریدنااتنا سستا نہیں جتنا کہ باقی شہروں میں ہے،یہاں پرانی گاڑی کی اوسط قیمت1,127mروپے کے لگ بھگ ہے، دوسری طرف لاہورمیں اوسط قیمت1,485mہے جبکہ ٹیوٹا کرولا سب سے پسندیدہ کار قرار پائی ہے ،پرانی گاڑی خریدنے کے خواہشمند افرادمختلف شہروں کے تقابلی جائزہ کیلئے کار مودی کی آن لائن انفارمیشن سے مدد لے سکتے ہیں،کار مودی آن لائن پورٹل نے اب تک ہزاروں افراد کو اپنی پسندکی کار کا گھر بیٹھے انتخاب کرنے میں مدد کی ہے،کار مودی پاکستان کے ایم ڈی راجہ مرادکے مطابق گوجرانوالہ جیسے شہروں کو اکثرنظراندازکیا جاتاہے کیونکہ وہ چھوٹے شہرہوتے ہیں لیکن ہمیں سمجھنا چاہیے کہ اب یہ بڑی آبادی کے ساتھ بڑے شہر ہیں جہاں بڑے پیمانے پر کاروبار ہورہا ہے،ہم اپنی ویب سائٹ پر گزشتہ ایک سال سے گوجرانوالہ،گجرات اور سیالکوٹ جیسے شہروں کیلئے گاڑیوں کی تلاش میں زیادہ سرگرمی دیکھ رہے ہیں اور اس حوالے سے اپنی کارکردگی پر کافی پرجوش ہیں۔

وقت اشاعت : 10/11/2015 - 19:20:01

متعلقہ عنوان :

قارئین کی رائے :

اپنی رائے کا اظہار کریں