لاہور: ایاز صادق فراڈ کر کے دوسری مرتبہ اسپیکر قومی اسمبلی منتخب ہوئے ، پوری دنیا ..
تازہ ترین : 1
لاہور: ایاز صادق فراڈ کر کے دوسری مرتبہ اسپیکر قومی اسمبلی منتخب ہوئے ..

لاہور: ایاز صادق فراڈ کر کے دوسری مرتبہ اسپیکر قومی اسمبلی منتخب ہوئے ، پوری دنیا میں ہماری جگ ہنسائی ہو رہی ہے، پی ٹی آئی رہنما علیم خان

لاہور(اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار. 10 نومبر 2015ء): پاکستان تحریکٍ انصاف کے رہنما علیم خان کا کہنا ہے کہ ایاز صادق این اے 122 کے ضمنی انتخاب میں فراڈ کر کے کامیاب ہوئے جس کے بعد ان کی اسپیکر کے طور پر کوئی حیثیت نہیں ہے، انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن میں این اے 122 کے ضمنی انتخاب میں دھاندلیوں کے ثبوت الیکشن کمیشن کو جمع کروا دئے ہیں. تحریک انصاف کی جانب سے این اے 122 میں ووٹرز کے ووٹ منتقل کرنے کا الزام لگایا گیا تھا۔

تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف کے رہنماعلیم خان اور شعیب صدیقی نے سیکرٹری الیکشن کمیشن سے ملاقات کی اور این اے 122 میں ووٹرز کی ووٹ منتقلی کی تمام تر تفصیلات جمع کروا دی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نادرا نے آج ہمیں ملاقات کیلئے ایک بجے کا وقت دیا تھا لیکن اب معذرت کر لی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ این اے 122 کے ضمنی انتخابات کے موقع پر 26 ہزار ووٹ دوسرے حلقوں سے منتقل ہوئے جبکہ 4542 ووٹ دوسرے حلقوں میں ٹرانسفر ہوئے۔

ووٹ ٹرانسفر کرنا فراڈ ہے جس پر ایف آئی آر بھی درج ہوتی ہے. سیکرٹری الیکشن کمیشن کے ساتھ ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے علیم خان نے کہا کہ این اے 122 کے ضمنی انتخابات میں دھاندلی نہیں بلکہ فراڈ ہوا ہے اور جب تک اہلیت ثابت نہیں ہوتی تب تک اسپیکر کی کوئی حیثیت نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ پوری دنیا میں پاکستان کی جگ ہنسائی ہے کہ دو دفعہ فراڈ کرنے والا شخص ایوان کو چلارہا ہے۔

مزید متعلقہ خبریں پڑھئیے‎ :

وقت اشاعت : 10/11/2015 - 13:26:15

قارئین کی رائے :

اپنی رائے کا اظہار کریں