پاکستان میں خطیر بجٹ کے با وجو د ، جنسی اور گھریلو تشدد کے واقعات میں تاحال کمی ..
تازہ ترین : 1

پاکستان میں خطیر بجٹ کے با وجو د ، جنسی اور گھریلو تشدد کے واقعات میں تاحال کمی نہ لائی جا سکی

گزشتہ تین سالوں کے دوران خواتین سے اجتماعی زیادتی کے 1012 واقعات ہوئے۔ رپورٹ

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔8 نومبر۔2015ء) پاکستان میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں روکنے اور دیگر معاملات بارے 171.900 ملین روپے کے بجٹ کے باوجود خواتین اور بچوں کے ساتھ جنسی زیادتیوں قتل ، تیزاب ، اجتماعی زیادتی ، لاپتہ کئے جانے اور گھریلو تشدد کے واقعات میں تاحال کمی نہ لائی جا سکی ۔ ہزاروں بچے جبری مشقت کا شکار ہیں ۔ پچھلے تین سالوں کے دوران خواتین سے اجتماعی زیادتی کے 1012 واقعات ہوئے ہیں ۔

2012 میں 4848 ، 2013 میں 4903 ، 2014 میں 7372 جبکہ جنوری سے جون 2015 تک 3538 واقعات ہوئے ہیں ۔ جنسی طور پر ہراساں کئے جانے کے واقعات کی تعداد 269 ہے ۔ گھریلو تشدد کے واقعات کی تعداد 1038 تک جا پہنچی ہے خواتین کو قانونی امداد کے لئے 3 وکلاء مقرر کئے گئے ہیں تاہم اتنے بڑے ملک میں مقرر کئے جانے والے وکلاء کی تعداد آٹے میں نمک کے برابر بھی نہیں ہے ۔ اب تک خواتین اور بچوں کے حوالے سے زیادہ تر شکایات پولیس کے خلاف ہیں ۔ سینٹ کی قائمہ کمیٹی کے قانون و انصاف و انسانی حقوق کو جمع کرائی گئی تفصیلات میں بتایا گیا ہے کہ یہ تمام تر معلومات ادارے نے ازخود اکٹھے کرنے کی بجائے میڈیا کی خبروں سے اکٹھی کی ہیں ۔

وقت اشاعت : 08/11/2015 - 14:45:53

متعلقہ عنوان :

اپنی رائے کا اظہار کریں